ترکی میں 107 جج برخاست، بغاوت کی کوشش میں ملوث ہونے کا الزام

May 06, 2017 02:34 PM IST | Updated on: May 06, 2017 02:34 PM IST

انقرہ۔  ترکی میں گزشتہ سال جولائی میں بغاوت کی ناکام کوشش میں مبینہ طور پر ملوث ہونے کے الزام میں 107 ججوں اور وکلاء کو  برخاست کر دیا گیا۔ ترکی کے ایک ٹیلی ویژن چینل نے یہ اطلاع دی ہے۔ چینل کے مطابق برخاست ججوں اور پرازیکیوٹرز کے لئے حراستی وارنٹ بھی جاری کیا گیا ہے۔ بغاوت کی ناکام کوشش کے بعد ترکی میں اب تک کل 1،45،000 سے زیادہ افسران کو برخاست یا معطل کیا چکا ہے جس میں 4238 جج بھی ہیں۔ اس کے علاوہ بغاوت میں شامل فوج، پولیس اور دیگر شعبوں کے تقریبا 40،000 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔

ترکی کا الزام ہے کہ بغاوت کے پیچھے امریکہ میں رہ رہے مذہبی رہنما فتح اللہ گولین کا ہاتھ تھا۔ بغاوت کی کوشش کے دوران 240 افراد ہلاک ہوئے تھے جس میں زیادہ تر شہری تھے۔

ترکی میں 107 جج برخاست، بغاوت کی کوشش میں ملوث ہونے کا الزام

سولہ جولائی دوہزار سولہ کو ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں بغاوت کی ایک ناکام کوشش کے دوران فوجی گاڑی کے سامنے ایک تباہ شدہ گاڑی کو دیکھا جا سکتا ہے۔ تصویر: رائٹرز

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز