پرانے شہر حیدرآباد کے سلم علاقوں میں 85 فیصد عوام ایک یا ایک زائد دائمی امراض میں مبتلا

May 24, 2017 11:34 PM IST | Updated on: May 24, 2017 11:36 PM IST

حیدرآباد : پرانے شہر حیدرآباد کے سلم علاقوں میں فیملی ہیلتھ سروے سے پتہ چلتا ہے کہ یہاں مقیم 85 فیصد عوام ایک یا ایک سے زاید دائمی امراض میں مبتلا ہیں اور 86 فیصد عوام سرکاری اسپتالوں سے رجوع ہونے سے کتراتے ہیں۔ اس سروے کا انعقاد غیرسرکاری تنظیم ہیلپنگ ہینڈ فاؤنڈیشن نے کیا ہے۔

حیدرآباد میں مقیم مسلم اقلیت کی صحت اور سماجی اور معاشی صورتحال کا مطالعہ کرنے کے لیے ہیلپنگ ہینڈ فاؤنڈیشن نے ایک سروے منعقد کیا ۔ اس سروے کیلئے پرانے شہر حیدرآباد کے طول وعرض میں قایم سلمس میں مقیم 5485 افراد کو شامل کیا گیا ۔

پرانے شہر حیدرآباد کے سلم علاقوں میں 85 فیصد عوام ایک یا ایک زائد دائمی امراض میں مبتلا

پرانے شہر حیدرآباد میں کئے گئے ہیلتھ سروے کے نتائج سے پتہ چلتا ہے کہ یہاں مقیم 85 فیصد عوام ایک یا ایک سے زائد امراض میں مبتلا ہیں اوران میں سے اکثراپنے علاج معالجہ کے لیے قرض لیتے ہیں۔ وہیں حکومت کی جانب سے فراہم کی گئی سہولتوں پر اعتماد کا یہ عا لم ہے کہ 86 فیصد عوام سرکاری اسپتالوں سے رجوع کرنے سے کتراتے ہیں۔ حیدرآباد کے ممبر پارلیمنٹ اسد الدین اویسی نے اس سروے کی رپورٹ کا اجرا کیا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز