تین ہفتوں تک ہوئی تھی پھولن دیوی کے ساتھ اجتماعی عصمت دری، انتقام لینے کے لئے 22 لوگوں کا قتل کر بن گئی بینڈٹ کوین

کئی بار اجتماعی عصمت دری، ظلم پھر ڈاکو سے پارلیمانی رکن بنی پھولن دیوی کی زندگی کا سفر رونگٹے کھڑے کرنے والا ہے۔

Aug 10, 2018 11:02 AM IST | Updated on: Aug 11, 2018 10:38 AM IST

پھولن دیوی جب واپس سسرال آئیں تو پتہ چلا کہ ان کے شوہر نے دوسری شادی کر لی ہے۔ اس دوران پھولن دیوی کی ملاقات کچھ ایسے لوگوں سے ہوئی جو ڈاکوں کے گینگ سے تھے۔ یہ لوگ اترپردیش اور مدھیہ پردیش کی سرحد بندیل کھنڈ میں سرگرم تھے۔ بعد میں پھولن دیوی انہی کی گینگ میں شامل ہو گئیں اور چمبل کے خاص ڈاکوں میں سے ایک بنیں۔ اس گینگ میں دو ڈاکوں کو پھولن دیوی سے پیار ہو گیا اور حالات ایسے ہو گئے کہ ایک ڈاکو نے ورکم مللہ نام کے دوسرے ڈاکو کا قتل کر دیا۔

اس واقعہ کےکچھ روز بعد ہی ٹھاکروں کے گینگ نے پھولن کو اغوا کر کے بہمئی گاوں لے گئے اور 3 ہفتہ تک اجتماعی عصمت دری کی۔ یہاں سے کسی طرح بچ نکلنے کے بعد پھولن ڈاکوں کی گینگ میں شامل ہو گئیں۔ 1981 میں پھولن بہمئی گاوں گئیں جہاں ان  کے ساتھ ریپ ہوا تھا۔ پھولن دیوی نے ان کو جنسی نقصان پہچانے والوں کی شناخت کر لی اور اس کے بعد گاوں کے 22 ٹھاکروں کو گولی مار دی ۔ اس واقع کے بعد پھولن دیوی کا ذکر ہر طرف ہونے لگا اور ان کا نام’ بینڈٹ کوین‘ پڑ گیا۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز