Live Results Assembly Elections 2018

روہنگیا مسلمانوں کی نقل مکانی اور تشدد پر میانمار حکومت لگام لگائے: امریکہ

واشنگٹن۔ امریکہ نے کہا ہے کہ میانمار سے روہنگیا مسلمانوں کے پر تشدد نقل مکانی سے پتہ چلتا ہے کہ ملک کی سیکورٹی فورسز شہریوں کی حفاظت نہیں کررہے ہیں اور میانمار کی حکومت کو اس پر روک لگانا چاہئے۔

Sep 12, 2017 11:34 AM IST | Updated on: Sep 12, 2017 11:34 AM IST

واشنگٹن۔  امریکہ نے کہا ہے کہ میانمار سے روہنگیا مسلمانوں کے پر تشدد نقل مکانی سے پتہ چلتا ہے کہ ملک کی سیکورٹی فورسز شہریوں کی حفاظت نہیں کررہے ہیں اور میانمار کی حکومت کو اس پر روک لگانا چاہئے۔ امریکی صدارتی دفتر نے ایک بیان جاری کرکے کہا کہ’’ہم میانمار کے حفاظتی افسران سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ قانون کی حکمرانی کا احترام کریں ، تشدد پر روک لگائیں اور تمام طبقے کی نقل مکانی کو روکیں‘‘۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ گزشتہ ماہ میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کے خلاف جاری تشدد کے بعد تین لاکھ سے بھی زائد مسلمان نقل مکانی کرچکے ہیں ۔ تاہم میانمار کی فوج کا یہ کہنا ہے کہ یہ کارروائی صرف روہنگیا انتہا پسندوں کے خلاف ہے۔ انہوں نے عام لوگوں کو نشانہ بنائے جانے کے الزام سے انکار کر دیا ہے۔ 25 اگست کو رخائن صوبہ کے شمالی حصے میں روہنگیا انتہا پسندوں نےپولیس چوکیوں کو نشانہ بنایا، جس میں 12 سیکورٹی اہلکار ہلاک ہوگئے تھے ۔ اس واقعہ کے بعد سے، تشدد وہاں پھیل گیا ہے اور روہنگیا مسلمانوں کو ملک چھوڑ کر بھاگنا پڑا۔

روہنگیا مسلمانوں کی نقل مکانی اور تشدد پر میانمار حکومت لگام لگائے: امریکہ

گزشتہ ماہ میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کے خلاف جاری تشدد کے بعد تین لاکھ سے بھی زائد مسلمان نقل مکانی کرچکے ہیں ۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز