کناڈا میں اب مسلمانوں کے خلاف نہیں پھیلائی جاسکے گی نفرت ، اسلاموفوبیا کو روکنے کیلئے قرارداد پاس

نئی دہلی۔ کناڈا کے معاشرے میں اسلاموفوبیا اور نسلی نفرت سے نمٹنے کے لئے ایک قرارداد پاس کی گئی ہے۔

Mar 26, 2017 08:29 AM IST | Updated on: Mar 26, 2017 02:15 PM IST

نئی دہلی۔ کناڈا کے معاشرے میں اسلاموفوبیا اور نسلی نفرت سے نمٹنے کے لئے ایک قرارداد پاس کی گئی ہے۔ کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کی اس قرارداد کو ہاؤس آف کامنس کے ارکان پارلیمنٹ نے اکثریت کے ساتھ قبول کر لیا ہے۔

حکومت نے اس تجویز کے ذریعے نفرت اور خوف کے بڑھتے ہوئے ماحول کو دبانے کی ضرورت کی شناخت کرنے اور اسلام سے خوف اور تمام طرح کے نسلی اور مذہبی تعصب کو معاشرے سے ختم کرنے کے لیے کہا گیا ہے۔ حال ہی میں کینیڈا کی کیوبیک میں مسجد پر حملہ ہوا تھا، جس میں 6 افراد کی موت ہو گئی تھی۔ حملہ آور نے اس وقت مسجد پر فائرنگ کر دی تھی جب وہاں نمازی نماز پڑھ رہے تھے۔

کناڈا میں اب مسلمانوں کے خلاف نہیں پھیلائی جاسکے گی نفرت ، اسلاموفوبیا کو روکنے کیلئے قرارداد پاس

Loading...

کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو نے واقعہ پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اسے 'دہشت گردانہ حملہ' کہا ہے۔ انہوں نے ٹوئٹر پر لکھا، مکمل کینیڈا کیوبیک سٹی مسجد پر ہوئے حملے سے ناخوش ہے۔ اس واقعہ کو کینیڈا میں اسلاموفوبیا کے اثر سے جوڑ کر دیکھا جا رہا تھا۔

حالیہ وقت میں کینیڈا میں اس طرح کے واقعہ میں اضافہ ہوا ہے۔ گزشتہ چند مہینوں میں مساجد اور یہودیوں کی عبادت گاہوں کو نقصان پہنچایا جا چکا ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز