سعودی عرب سمیت پانچ عرب ممالک کا قطر سے فیفا ورلڈ کپ 2022 کی میزبانی چھیننے کا مطالبہ

Jul 16, 2017 09:52 PM IST | Updated on: Jul 16, 2017 10:06 PM IST

لندن: پانچ عرب ممالک نے قطر پر دہشت گرد تنظیموں کو فروغ دینے کا الزام لگاتے ہوئے اس سے 2022 میں ہونے والے فیفا ورلڈ کپ کی میزبانی چھیننے کی بین الاقوامی فٹ بال فیڈریشن (فیفا) سے مانگ کی ہے۔ سوئٹزرلینڈ کی ایک ویب سائٹ کے مطابق، عرب کے پانچ ملک سعودی عرب، یمن، متحدہ عرب امارات (یو اے ای)، بحرین اور مصر نے فیفا کو اجتماعی طور پر ایک خط میں آرٹیکل 85 کے تحت قطر سے 2022 میں ہونے والے فیفا ورلڈ کپ کی میزبانی چھیننے کا مطالبہ کیا ہے ۔

اگرچہ فیفا صدر جياني انفنٹینو نے ایسے کسی بھی خط کے ملنے سے انکار کیا ہے۔فیفا ترجمان نے کہاکہ فیفا صدر کو ایسا کوئی خط نہیں ملا ہے جس میں قطر سے میزبانی چھیننے کا مطالبہ کیا گیا ہو۔ فیفا 2022 میں ہونے والے فیفا ورلڈ کپ کو لے کر قطر کی مقامی کمیٹی کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہے ۔

سعودی عرب سمیت پانچ عرب ممالک کا قطر سے فیفا ورلڈ کپ 2022 کی میزبانی چھیننے کا مطالبہ

اس درمیان قطر حکومت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ قطر ورلڈ کپ کی سرگرمیوں کو لے کر سعودی عرب اور دیگر ممالک کو سرگرمیوں پر مسلسل نظر بنائے ہوئے ہے۔قطر کا کہنا ہے کہ اسے بھی اس طرح کا کوئی خط موصول نہیں ہوا ہے۔ قطر کو 2022 میں نومبر دسمبر میں فیفا ورلڈ کپ کی میزبانی کرنی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز