آسیان کانفرنس : وزیر اعظم مودی کی امریکی صدر ٹرمپ سے ملاقات ، عالمی توقعات پر پورا اترے گا ہندوستان

وزیر اعظم نریندر مودی نے یہاں آسیان چوٹی کانفرنس کے موقع پر امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے ساتھ باہمی ملاقات میں اہم بات چیت کی۔

Nov 13, 2017 06:09 PM IST | Updated on: Nov 13, 2017 06:09 PM IST

منیلا: وزیر اعظم نریندر مودی نے یہاں آسیان چوٹی کانفرنس کے موقع پر امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے ساتھ باہمی ملاقات میں اہم بات چیت کی۔ مسٹر مودی نے امریکی صدر کو یقین دلایا کہ ہندوستان اقوام عالم بشمول امریکہ کی تمام تر توقعات پر پورا اترے گا ۔ مسٹر مودی نے مسٹرٹرمپ سے کہا کہ ’’بھارت سے وشو( دنیا) کو جواپیکچھا( امیدیں) ہیں، امریکہ کو جو اپیکچھا(امیدیں) ہیں، بھارت اس میں کھڑا اترنے میں بھر شک(حتی المقدور) پریاس(کوشش) کرتا رہا ہے اور کرتا رہے گا۔‘‘

مسٹر مودی نے کہا کہ صدر امریکہ نے ہندوستان کے ساتھ امریکہ کے باہمی تعلقات کے حوالے سے خوش امیدی کا اظہار کیا ہے اور اپنے حالیہ ہر سفر میں انہوں نے ہندوستان کی جی بھرکر تعریف کی ہے۔ یہ ملاقات امریکہ ،ہندوستان، آسٹریلیا اور جاپان کے ذمہ داران کی ایک اہم ملاقات سے عین پہلے ہوئی ہے۔ اس اہم ملاقات میں چین کے بڑھتے ہوئے اثرات خصوصا ہند پیسفک خطے میں چینی سرگرمیوں سے نمٹنے کے لئے ایک چوطرفہ محاذ قائم کرنے کی کوشش ہے۔

آسیان کانفرنس : وزیر اعظم مودی کی امریکی صدر ٹرمپ سے ملاقات ، عالمی توقعات پر پورا اترے گا ہندوستان

چاروں ملکوں کی اس یکجائی اور ایک متبادل صورت کے ساتھ سامنے آنے کی کوشش ایک حکمت ہے جس کا مقصد خطے اور دنیا میں بڑھتے ہوئے چینی اثرات کا مقابلہ کرنا ہے۔ ایک نئے اسٹریٹجک اور ایکنامک بلاک کے فروغ کو ٹرمپ انتظامیہ کے اس مصمم ارادے کے طور پر دیکھا جارہا ہے جس کا مقصد چین کے جارحانہ رویہ کا مقابلہ کرنا ہے ۔ یہ رویہ جنوبی ، چینی، سمندری علاقے اور ہند پیسفک خطے میں خاص طور پر سامنے آرہا ہے ۔

اوبامہ انتظامیہ کے عہد میں بھی امریکہ نے اس حوالے سے ہندوستان سے بات کرنے کی کوشش کی تھی۔ امریکی انتظامیہ ہندپیسفک خطے میں ہندوستان کے وسیع تر رول کے حق میں ہے۔یہ ملاقات اس لحاظ سے بھی اہم ہے کہ صدر امریکہ چین اور دوسرے ایشیائی ملکوں کا اہم دورہ کرنے والے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز