لاہور فدائی بم دھماکہ میں 16 افراد ہلاک، 85 زخمیوں میں کئی کی حالت نازک

Feb 14, 2017 12:38 PM IST | Updated on: Feb 14, 2017 12:38 PM IST

لاہور۔  پنجاب اسمبلی کے سامنے فدائی دھماکے  میں  پانچ پولس اہلکارسمیت 16 لوگ ہلاک اور 85 زخمی ہوگئے۔ فدائی دھماکہ  پنجاب اسمبلی کے سامنے مال روڈ پر ہوا جس میں آج ٹی وی کی ڈی ایس یجی کا ڈرائیور،انجینئر اور کیمرا مین بھی زخمی ہوئے۔ دھماکے کی ذمہ داری کالعدم تحریک طالبان پاکستان سے علیحدگی اختیار کرنے والے گروپ 'جماعت الاحرار' نے قبول کرلی۔ دھماکے کے وقت مال روڈ پر فارما مینوفیکچررز اور کیمسٹس کا دھرنا جاری تھا، اور احمد مبین مظاہرین سے مذاکرات کے لیے آئے تھے۔

پولیس کے محکمہ انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی) کے سربراہ ڈاکٹر محمد اقبال نے دھماکہ خود کش ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ ’خودکش بمبار پیدل چل کر آیا تھا۔‘ دھماکے کے بعد علاقے میں بھگڈر مچ گئی، پولیس کی بھاری نفری نے جائے وقوع پر پہنچ کر علاقے کو گھیرے میں لے لیا اور مال روڈ پر جمع لوگوں کو منتشر کرنے کا عمل شروع کیا۔ ریسکیو ٹیموں نے ایمبولینسز کے ذریعے زخمیوں کو گنگا رام اور میو ہسپتالوں میں منتقل کیا جہاں ایمرجنسی بھی نافذ کردی گئی ہے، جبکہ زخمیوں میں سے متعدد افراد کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔

لاہور فدائی بم دھماکہ میں 16 افراد ہلاک، 85 زخمیوں میں کئی کی حالت نازک

اے پی

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز