برازیل کا سپریم کورٹ کانگریس کے ساتھ ٹکراؤ سے پیچھے ہٹا

Oct 12, 2017 12:30 PM IST | Updated on: Oct 12, 2017 12:33 PM IST

براسیلیا۔  برازیل کے سپریم کورٹ نے کل بدعنوانی کے الزام میں گھرے سینیٹر اے سی اور نیویس کو برطرف کئے جانے کے سلسلے میں آخری فیصلہ لینے کا اختیار کانگریس کو دے دیا۔ بیشتر ججوں نے ملک کی سب سے بڑی مانے جانے والی سیاسی بدعنوانی کے معاملے میں کانگریس کے ساتھ تصادم سے احتراز کرنے کا فیصلہ کیا، جس میں صدر مائیکل ٹیمر اور کابینہ کے متعدد وزرا بھی ملوث ہوئے ہیں۔

کانگریس کے ایوان زیریں میں اس ماہ کے آخر میں ووٹنگ ہونے کی امید ہے تاکہ مسٹر ٹیمر کے خلاف میٹ پیکر جے بی ایس ایس اے سے منسلک بدعنوانی کے معاملے میں سپریم کورٹ کی طرف سے مقدمہ چلانے سے بچایا جا سکے۔ برازیل میں کمپنیوں کی ذریعہ 110 سے زائد سیاستدانوں کو 2014 کے بعد سرکاری معاہدوں کو حاصل کرنے اور قانون کو متاثر کرنے کے لئے رشوت دینے کا انکشاف ہوا ہے۔

برازیل کا سپریم کورٹ کانگریس کے ساتھ ٹکراؤ سے پیچھے ہٹا

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز