جیل میں ملاقاتیوں کے چہرے پر سیل لگانے کے معاملے میں حقوق انسانی کمیشن کا نوٹس

Aug 08, 2017 06:38 PM IST | Updated on: Aug 08, 2017 06:38 PM IST

بھوپال۔  مدھیہ پردیش انسانی حقوق کمیشن نے سنٹرل جیل بھوپال میں قیدیوں سے ملاقات کے لیے آنے والے رشتہ داروں کے چہروں پر سیل لگانے کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے جیل کے ڈائریکٹر جنرل سے سات دن میں رپورٹ طلب کی ہے۔ آج یہاں جاری بیان میں کمیشن نے اس واقعہ کو غیر انسانی اور انسانی اقدار کے خلاف بتایا ہے اور کہا ہے کہ اس سے ملاقات کے لیے آنے والے بچوں کے بنیادی اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہوئی ہے۔

کمیشن نے اس طرح کی رسم کو فوری طور پر بند کیے جانے کی سفارش کی ہے ۔ کمیشن نے واقعہ کے بارے میں کہا ہے کہ چہرے پر سیل لگا کر بچوں کے وقار کے حق کو چھینا گیا ہے اور انہیں ذہنی اذیت سے دوچار کیاگیا ہے۔ کمیشن نے اس کے لیے متاثرہ افراد کو دس دس ہزار بطور معاوضہ دینے کی سفارش کی ہے اور ساتھ ہی ساتھ متاثرہ افراد کے نام اور ان کے پتے سے متعلق تفصیلات بھی مانگی ہیں۔

جیل میں ملاقاتیوں کے چہرے پر سیل لگانے کے معاملے میں حقوق انسانی کمیشن کا نوٹس

تصویر: ای ٹی وی

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز