بھوپال اجتماعی عصمت دری کے چاروں ملزمین کو آخری سانس تک قید کی سزا

بھوپال۔ مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال میں 31اکتوبر کی رات آئی اے ایس کی تیاری کر رہی طالبہ کی اجتماعی عصمت دری معاملہ میں آج یہاں کی ایک فاسٹ ٹریک عدالت نے چاروں ملزمین کو قصوروار ٹھہراتے ہوئے آخری سانس تک قید کی سزا سنائی ہے۔

Dec 23, 2017 06:05 PM IST | Updated on: Dec 23, 2017 06:05 PM IST

بھوپال۔ مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال میں 31اکتوبر کی رات آئی اے ایس کی تیاری کر رہی طالبہ کی اجتماعی عصمت دری معاملہ میں آج یہاں کی ایک فاسٹ ٹریک عدالت نے چاروں ملزمین کو قصوروار ٹھہراتے ہوئے آخری سانس تک قید کی سزا سنائی ہے۔ جج سویتا دوبے نے یہاں واقعہ کے 52دن بعد سنائے گئے اپنے فیصلہ میں چارو ں ملزمین گولو بہاری، عمر چھوٹو، رمیش اور راجیش کو قصوروار قرار دیا اور انہیں آخری سانس تک قید کی سزا سنائی۔ سزا سنائے جانے کے وقت چاروں ملزم عدالت میں موجود تھے۔

راجدھانی کے مصروف ترین علاقہ ایم پی نگر میں 31اکتوبر کی دیر شام پی ایس سی کی تیاری میں مصروف ودیشا کی ایک طالبہ کے ساتھ پہلے لوٹ کی کوشش کی اور اس کے بعد اجتماعی عصمت دری ہوئی تھی۔ طالبہ کو اس کی رپورٹ لکھوانے میں کئی تھانوں کے چکر لگانے پڑے تھے بعد میں اس کی میڈیکل رپورٹ میں غلطیوں کے معاملہ نے بھی خاصا طول پکڑ لیا تھا ۔ لاپرواہی سامنے آنے کے بعد کئی پولیس افسران کو معطل اور ٹرانسفر کیا گیا تھا۔

بھوپال اجتماعی عصمت دری کے چاروں ملزمین کو آخری سانس تک قید کی سزا

سزا سنائے جانے کے وقت چاروں ملزم عدالت میں موجود تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز