چھتیس گڑھ کے گئو شالہ میں گایوں کی موت کے معاملہ میں بی جے پی لیڈر گرفتار

Aug 19, 2017 01:52 PM IST | Updated on: Aug 19, 2017 01:52 PM IST

رائے پور / درگ۔  چھتیس گڑھ کے ضلع درگ میں ایک سرکاری فنڈ یافتہ گئوشالا میں بڑی تعداد میں گایوں کی بھوک سے موت ہوجانے کے بعد گئوشالا کے آپریٹر بی جے پی لیڈر کو پولس نے گرفتار کر لیا ۔ پولس کے مطابق ریاستی گئو سروس کمیشن کی شکایت پر گئوشالا آپریٹر ہریش ورما کو پولس نے کل شام گرفتار کر لیا۔ اس کے خلاف زراعتی جانوروں کے تحفظ ایکٹ کی دفعہ 4 اور 6 اور جانوروں پر تشدد کے انسداد ایکٹ 1960 ، نیز تعزیرات ہند کی دفعہ 409 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ ضلع درگ کے راجپور میں واقع گئوشالا کا آپریٹر ہریش ورما بی جے پی کا لیڈر ہے اور جامل میونسپل کا نائب صدر بھی ہے۔ ریاستی حکومت نے 93 کروڑ روپے سے زائد رقم اس کی گئو شالا کو دی ہے۔

گئو شالا میں گایوں کی موت اب بھی ہو رہی ہے۔ گئو سروس کمیشن نے پہلے ہی اس کے بارے میں غیر قانونی طور پر شکایات موصول کی ہیں۔ اس سلسلے میں کمیشن نے گئو شالا کے آپریٹر کو نوٹس جاری کیا اور جواب بھی طلب کیا، لیکن سیاسی پارٹی میں اپنی پہنچ کی وجہ سے ان کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ گئو سروس کمیشن کے مطابق گئوشالا میں گایوں کا چارہ اور دیگر بندوبست بہت خراب ہے۔

چھتیس گڑھ کے گئو شالہ میں گایوں کی موت کے معاملہ میں بی جے پی لیڈر گرفتار

علامتی تصویر

دریں اثناء، یہ بھی پتہ چلا ہے کہ اس گئوشالا میں پہلے بھی گایوں کی موت ہوتی رہی ہے، لیکن اس کو چھپا دیا جاتا تھا۔ گرفتاری کے بعد، پولیس کے طرز عمل پر بھی سوال اٹھایا جا رہا ہے۔ یہ الزام لگایا گیا ہے کہ ملزم کو گرفتاری کے بعد پولیس اسٹیشن میں رکھنے کے بجائے ہوٹل میں رکھا گیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز