بی جے پی لیڈرکیلاش وجے ورگیہ کا الزام ، مدھیہ پردیش میں کسانوں کو بھڑکانے کے پیچھے کانگریس کا ہاتھ

Jun 08, 2017 08:26 PM IST | Updated on: Jun 08, 2017 08:26 PM IST

بھوپال: بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے جنرل سیکرٹری کیلاش وجے ورگیہ نے آج الزام لگاتے ہوئے کہا کہ مدھیہ پردیش میں کسانوں کو بھڑکانے اور تشدد کرانے میں کانگریس نائب صدر راہل گاندھی اور ان کی پارٹی کا ہاتھ ہے۔

ریاست کے مغربی آنچل میں واقع اندور کے رہنے والے مسٹر وجے ورگیہ نے سوشل میڈیا کے ذریعے اپنے بیان میں کہا کہ کانگریس نائب صدر آج مدھیہ پردیش میں موٹر سائیکل پر سوار جس کانگریس ممبر اسمبلی (جیتو پٹواری) کے ساتھ نکلے تھے، ان کے اوپر کسانوں کو بھڑکانے کا الزام انتظامیہ نے میڈیا کی موجودگی میں لگایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسٹر گاندھی کا ایسے رکن اسمبلی کے ساتھ جانا واضح کرتا ہے کہ کسانوں کو بھڑکانے اور تشدد کرانے میں مسٹر گاندھی اور کانگریس کا ہاتھ ہے۔

بی جے پی لیڈرکیلاش وجے ورگیہ کا الزام ، مدھیہ پردیش میں کسانوں کو بھڑکانے کے پیچھے کانگریس کا ہاتھ

مسٹر وجے ورگیہ نے سوشل میڈیا پر ہی ایک دیگر بیان میں کہا کہ بی جے پی ہمیشہ کسانوں کے ساتھ تھی، ہے اور رہے گی۔ وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان اور حکومت کے بیشتر وزیر کسان ہیں اور یہ سب ہمیشہ کسانوں کے مفاد میں سوچتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کسانوں سے بدامنی پھیلانے والے عناصر کی سازش کو ناکام کرنے میں حکومت کی مدد کرنے کی درخواست بھی کی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز