آٹھ ماہ کی بچی کی لاش ملنے سے اندور میں سنسنی، عصمت دری کے بعد قتل کا خدشہ

جموں وکشمیر کے کٹھوعہ اجتماعی عصمت دری معاملہ ابھی سرد بھی نہیں پڑا تھا، کہ مدھیہ پردیش کی اقتصادی راجدھانی اندور میں ایک خطرناک جرائم کا معاملہ سامنے آیا ہے۔

Apr 21, 2018 09:05 AM IST | Updated on: Apr 21, 2018 09:05 AM IST

جموں وکشمیر کے کٹھوعہ اجتماعی عصمت دری معاملہ ابھی سرد بھی نہیں پڑا تھا، کہ مدھیہ پردیش کی اقتصادی راجدھانی اندور میں ایک  خطرناک جرائم کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اندور شہر میں 8ماہ کی بچی کی لاش ملنے سے سنسنی پھیل گئی۔ خدشہ ظاہر کیاجارہا ہے کہ بچی کے پرائیوٹ پارٹ سے چھیڑ چھاڑ کی گئی ہے، اس کے بعد گلا دباکر قتل کردیا گیا۔

معاملہ ایم جی روڈ تھانہ کے شیو کلاس پیلیس کا ہے۔ یہاں جمعہ کی صبح ایک ماہ کی بچی کی لاش ملی ہے۔ دراصل پولس کو مخبر سے اطلاع ملی تھی کہ شیو پیلیس کامپلیکس کے بیسمنٹ میں ایک آٹھ ماہ کی بچی کی لاش پڑی ہوئی ہے۔ اطلاعات کی بنیاد پر پولس کے اعلیٰ افسران اور ایف ایس ایل کی ٹیم بھی جائے واردات پر پہنچی تو انہیں بچی کی لاش پڑی ہوئی ہے۔

آٹھ ماہ کی بچی کی لاش ملنے سے اندور میں سنسنی، عصمت دری کے بعد قتل کا خدشہ

اندور میں 8 سالہ بچی کی لاش ملی۔

پولس نے بتایا کہ بچی کے پرائیویٹ پارٹ سے خون بھی نکل رہا تھا۔ لاش ملنے سے پولس بھی حیرت زدہ ہوگئی۔ بتایا جا رہا ہے کہ بچی کے ساتھ کچھ غلط حرکت کرکے لاش کو یہاں لاکر پھینک دیاگیاہے۔

واضح رہے کہ بچی کے اہل خانہ پھگے بیچ کر زندگی بسر کرتے ہیں۔ پولس ہر پہلو پر جانچ پڑتال کررہی ہے۔ پورے علاقے میں لگے سی سی ٹی وی کےفٹیج کو دیکھ رہی ہے۔ بچی کے والدین کی تلاش بھی کی جارہی ہے۔

پولس نے لاش کو اپنے قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لئے ایم وائے اسپتال بھیج دیا ہے۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے کے بعد ہی بچی کی موت کا انکشاف ہوسکے گا۔ فی الحال ایم جی روڈ پولس معاملہ درج کرکے تفصیلی جانچ میں مصروف ہوگئی ہے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز