مندسور فائرنگ : مشتعل کسانوں کا ریاست گیربند، کانگریس لیڈرمیناکشی نٹراجن گرفتار، راہل کے بھی پہنچنے کا امکان

Jun 07, 2017 09:45 AM IST | Updated on: Jun 07, 2017 09:46 AM IST

بھوپال : مدھیہ پردیش کے مندسور میں پولیس فائرنگ میں چھ کسانوں کی موت کے بعد بھارتیہ کسان مزدور یونین نے بدھ کو ریاست گیر بند کا اعلان کیا ہے ۔ بند کا ریاست کے مندسور، نیمچ اور رتلام کے علاوہ ریاست کے کئی اضلاع میں وسیع اثر دیکھنے کو مل رہا ہے ۔ بتایا جا رہا ہے کہ کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی بھی مندسور کا دورہ کر سکتے ہیں ۔

ادھر پولیس فائرنگ میں ہلاک ہوئے کسانوں کی آخری رسوم میں شرکت کیلئے جارہی سابق ممبرپارلیمنٹ اور کانگریس کی سینئر لیڈر میناکشی نٹراجن کو گرفتار کرلیا گیا ۔

مندسور فائرنگ : مشتعل کسانوں کا ریاست گیربند، کانگریس لیڈرمیناکشی نٹراجن گرفتار، راہل کے بھی پہنچنے کا امکان

اس واقعہ کے بعد ضلع انتظامیہ نے کشیدگی سے متاثرہ پپليا منڈی علاقے میں کرفیو لگا دیا  ہے۔ ضلع کے باقی حصوں میں بھی حکم امتناعی نافذ کر دیا گیا ہے ۔ مدھیہ پردیش کے علاوہ راجستھان اور مہاراشٹر میں بھی کسانوں کا مظاہرہ جاری ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز