مدھیہ پردیش میں شرمناک واقعہ ، 70 روپے کی چوری کے شک میں دو طالبات کے اتروائے گئے کپڑے

Nov 05, 2017 02:51 PM IST | Updated on: Nov 05, 2017 02:51 PM IST

دموہ : شیوراج سنگھ کی حکومت والے مدھیہ پردیش ایک انتہائی شرمنا واقعہ پیش آیا ہے ، جہاں دو طالبات کی صرف اس لئے کپڑے اتار کرکے تلاشی لی گئی کہ ایک طالبہ کا 70 روپے چور ی ہوگیا تھا ۔ یہ شرمناک واقعہ مدھیہ پردیش داموہ ضلع میں پیش آیا ہے ۔ اس واقعہ کے انکشاف کے ساتھ ہی انتظامیہ حرکت میں آگئی اور اس نے اس کی جانچ شروع کردی ہے۔

ضلع ایجوکیش افسر عجب سنگھ ٹھاکر نے ہفتہ کو بتایا کہ رانی درگاوتی گرلس سینئر سکینڈری سکول میں دسویں کی ایک طالبہ نے اپنے 70 روپے چوری ہوجانے کی شکایت کی ، جس کے بعد ٹیچر جیوتی گپتا نے بیگ وغیرہ کی تلاشی لی ، مگر اس کو کچھ نہیں ملا ۔ طالبات کا کہنا ہے کہ ٹیچر نے تلاشی کے نام پر ان کے سبھی کپڑے بھی اتروا دئے ۔ علاوہ ازیں حقیقت کا پتہ لگانے کیلئے جادو ٹونا کا بھی سہارا لیا گیا ۔ تاہم ٹیچر نے ان الزامات کو غلط قرار دیا ہے۔

مدھیہ پردیش میں شرمناک واقعہ ، 70 روپے کی چوری کے شک میں دو طالبات کے اتروائے گئے کپڑے

ضلع ایجوکیش افسر کے مطابق اسکول میں ایسا واقعہ پیش آیا ہے ، اس کی اطلاع انہیں جمعہ کو دیر شامل ملی ۔ طالبات کی شکایت اور ٹیچر کا موقف سامنے آنے کے بعد دو خواتین افسروں کے ذریعہ اس معاملہ کی جانچ کرائے گی ۔ ساتھ ہی ساتھ شکایت صحیح پائے جانے پر کارروائی کی جائے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز