حج 2018 : فارم بھرنے کے پہلے دن ہی مدھیہ پردیش ریاستی حج کمیٹی کے دفتر میں جم کر ہنگامہ آرائی

حج فارم نہ ملنے سے ناراض عازمین نے حج آفس میں نہ صرف نعرے بازی کی بلکہ مرکزی حج کی پالیسی کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔

Nov 16, 2017 11:23 PM IST | Updated on: Nov 16, 2017 11:23 PM IST

بھوپال : حج 2018 کا فارم بھرنے کے پہلے دن ہی مدھیہ پردیش اسٹیٹ حج کمیٹی دفتر میں جم کر ہنگامہ ہوا۔ حج فارم نہ ملنے سے ناراض عازمین نے حج آفس میں نہ صرف نعرے بازی کی بلکہ مرکزی حج کی پالیسی کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔ وہیں عازمین حج کا کوٹہ ختم کرنے اور دوسرے مسائل کو لے کر مدھیہ پردیش سنیکت مورچہ نے سپریم کورٹ جانے کا اعلان کیا ہے۔

مرکزی حج کمیٹی نے حج 2018 کے فارم داخل کرنے کے لئے پندرہ نومبر کی تاریخ کا اعلان کیا تھا۔ اعلان کے مطابق ہر سال کی طرح امسال بھی عازمین حج فارم لینے کے لئے مدھیہ پردیش اسٹیٹ حج کمیٹی کی آفس پہنچے ۔ عازمین حج کوامید تھی کہ حج کمیٹی کے ذریعہ انہیں فارم مہیا کرایا جائے گا ، جسے وہ فارم فیس کے ساتھ حج کمیٹی میں داخل کر دیں گے ۔ لیکن ان کی امیدوں پر اس وقت پانی پھر گیا جب حج کمیٹی کے ذریعہ ان سے حج فارم کو انٹر نیٹ کے ذریعہ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے کہا گیا۔

حج 2018 : فارم بھرنے کے پہلے دن ہی مدھیہ پردیش ریاستی حج کمیٹی کے دفتر میں جم کر ہنگامہ آرائی

عازمین حج کا کہنا ہے کہ صوبہ کے جن دور دراز علاقوں میں وہ رہتے ہیں، وہا ں پر ہر جگہ انٹر نیٹ کی سہولیات مہیا نہیں ہیں۔ ایسے میں حج کمیٹی انٹر نیٹ سے فارم داخل کرنے کی بات کر کے ان کے ساتھ دھوکہ کر رہی ہے۔ عازمین کی شکایت یہیں پر ختم نہیں ہوئی ، بلکہ ان کی شکایت یہ بھی ہے کہ چار سال کے ویٹنگ لسٹ کےعازمین حج کا کوٹہ ختم کرکے بھی حج کمیٹی نے ان کے ساتھ دھوکہ کیا ہے۔

ادھر حج کمیٹی کی ناقص کارکردگی کے خلاف عازمین حج کے ساتھ مدھیہ پردیش سنیکت مورچہ کے کارکنان نے حج آفس میں جم کر نعرہ بازی کی ۔ تاہم عازمین حج کی ناراضگی اور ای ٹی وی کی خبر کےبعد حج کمیٹی کے ذمہ داران نے عازمین کی ناراضگی کو دور کرنے کے لئے انٹرنیٹ سے فارم ڈاؤن لوڈ کر کے انہیں مہیا کرایا۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز