بھوپال سے جماعت اسلامی ہند نے کیا مسلم پرسنل لا بیداری مہم کا آغاز

Apr 24, 2017 08:41 PM IST | Updated on: Apr 24, 2017 08:41 PM IST

بھوپال۔ مد ھیہ پردیش میں جماعت اسلامی ہند نے اپنی مسلم پرسنل لاء بیداری مہم شروع کردی ہے۔ مہم کے تحت مد ھیہ پردیش کے تمام اضَلاع میں جلسے ، سمینار، سمپوزیم کے ساتھ پمفلیٹ بھی تقسیم کیے جائیں گے تاکہ مسلم پرسنل لا سے متعلق پھیلی غلط فہمیوں کا ازالہ ہو سکے۔ تین طلاق کے معاملے کو لیکر جس طرح سے ملک گیر سطح پر طرح طرح کی باتیں سامنے آ رہی ہیں، سماجی ، سیاسی اورحکومت کی سطح پر تین طلاق کے معاملے کو لیکر جس طرح کے بیانات سامنے آر ہے ہیں ، اسے دیکھتے ہوئےجماعت اسلامی ہند نے مسلم پرسنل لا بیداری مہم شروع کی ہے۔

 مدھیہ پردیش میں بھوپال سے بیداری مہم کا آغاز کیا گیا ۔ بیداری مہم کے تحت مد ھیہ پردیش کے تاریخی شہروں بھوپال، اندور، جبلپور، اجین، چھندواڑہ وغیرہ میں عوامی جلسوں کے ساتھ گھر گھر جا کر لوگوں سے رابطہ کرنے اور مسلم سماج کے ساتھ غیر مسلم حضرا ت کو نکاح ، طلاق، وراثت کے متعلق پھیلی غلط فہمیوں کاازالہ کرنے کی کوشش کی جائے گی ۔جماعت اسلامی ہند کی مسلم پرسنل لا بیداری مہم کا آغازبھوپال سے کیا گیا ہے اوراس کا اختتام بھی بھوپال میں کیا جائے گا ۔ مہم کااختتام سات مئی کو ہوگا۔ اس دن بھوپال کے اقبال میدان میں جلسہ عام کا انعقاد کیا جائے گا جس میں ملک کے ممتازعلمائے دین شرکت کریں گے۔ مسلم پرسنل لا بیداری مہم کے آغازکے موقع پر بھوپال میں منعقدہ پریس کانفرنس میں جماعت اسلامی ہند کے اہم ارکان نے شرکت کی اور مہم کے تعلق سے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ بیداری مہم کے تحت جہاں سماج میں تعلیمی بیداری پر زور دیا گیا وہیں مسلم مسائل کے حل کے لئے شرعی عدالتوں کے قیام کی بھی بات کی گئی۔ بیداری مہم میں خواتین کی بیداری کے لئے جماعت اسلامی ہند کی خواتین ونگ بھی اپنا کردار ادا کریگی۔

بھوپال سے جماعت اسلامی ہند نے کیا مسلم پرسنل لا بیداری مہم کا آغاز

جماعت اسلامی ہند کا ماننا ہے کہ طلاق کے معاملے کو لیکر ملک میں جس طرح کی تشہیر کی جا رہی ہے ، یہ سچ نہیں ہے۔ اگر ملک میں رہنے والی تمام قوموں سے مسلم سماج کا تقابل کیا جائے تو مسلم سماج میں طلاق کے واقعات سب سے کم ہیں ۔ اس کے باوجود بھی اگر ایسے معاملات سامنے آر ہے ہیں  تو اس کے لئے کوشش کی جائے گی کہ ایسے واقعات نہ ہوں اور مسلم سماج میں لوگ خوشحال زندگی گزار سکیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز