کانگریس ممبر اسمبلی نے بی جے پی لیڈر کومارا تھپڑ ، ہنگامہ ، معاملہ درج

مدھیہ پردیش کے دھار ضلع میں کانگریس ممبر اسمبلی امنگ سنگار کے ذریعہ بی جے پی لیڈر کو تھپڑ مارنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔

Aug 26, 2018 04:50 PM IST | Updated on: Aug 26, 2018 04:50 PM IST

مدھیہ پردیش کے دھار ضلع میں کانگریس ممبر اسمبلی امنگ سنگار کے ذریعہ بی جے پی لیڈر کو تھپڑ مارنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ اس تھپڑ کے واقعہ کے بعد ہنگامہ مچ گیا ہے ۔ بی جے پی لیڈر پردیپ گادیا کی شکایت پر پولیس نے مار پیٹ کی دفعات کے تحت معاملہ درج کرلیا ہے ۔

یہ واقعہ دھار ضلع کے ٹانڈا گرام میں پیش آیا ، جہاں بجلی کا تار ٹوٹنے کی وجہ سے چھ سالہ بچی کی موت ہوگئی تھی ۔ اس کے بعد متاثرہ کنبہ کو چار لاکھ کی مالی مدد کا چیک دینے کے دوران یہ معاملہ پیش آیا ۔ اس دوران گاندھوانی سے کانگریس کے ممبر اسمبلی امنگ سنگار اور بی جے پی لیڈر پردیپ گادیا کے درمیان تنازع ہوگیا ، جس دوران امنگ سنگار نے پردیپ گادیا کو تھپڑ رسید کردیا ۔ اتنا ہی نہیں اس موقع پر بی جے پی ممبر پارلیمنٹ ساوتری ٹھاکر بھی موجود تھیں ۔

کانگریس ممبر اسمبلی نے بی جے پی لیڈر کومارا تھپڑ ، ہنگامہ ، معاملہ درج

کانگریس ممبر اسمبلی امنگ سنگار

دراصل بتایا جارہا ہے کہ تنازع اس لئے ہوا کیونکہ بی جے پی لیڈر کا کہنا تھا کہ چیک ممبر پارلیمنٹ ساوتری ٹھاکر کے ہاتھوں سے دلایا جائے گا ۔ اس تنازع کا ویڈیو وائرل ہورہا ہے ، جس میں ممبر اسمبلی امنگ سنگارا بی جے پی لیڈر گادیا کو تھپڑ مارتے ہوئے نظرآرہے ہیں اور ممبر اسمبلی نے چیک افسران سے چھین کر اہل خانہ کے سپرد کردیا ۔

اس کے بعد معاملہ تھانے پہنچ گیا ۔ بی جے پی لیڈر گادیا نے تھانے میں ممبر اسمبلی پر الزام لگایا ہے کہ انہوں اور کانگریسی لوگوں نے مار پیٹ کی اور جان سے مارنے کی دھمکی دی ۔ وہیں ممبر اسمبلی سنگار نے بھی تھانے میں عرضی داخل کرکے گادیا پر الزام لگایا ہے کہ انہوں نے ذات سے متعلق الفاظ کا استعمال کرتے ہوئے ہاتھاپائی کی اور چیک چھیننے کی کوشش کی ۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز