اٹیر سے کانگریسی امیدوار ہیمنت كٹارے ای وی ایم کا جائزہ لینے اچانک اسٹرانگ روم پہنچے

Apr 11, 2017 03:01 PM IST | Updated on: Apr 11, 2017 03:02 PM IST

بھنڈ۔  مدھیہ پردیش کے ضلع بھنڈ کی اٹیر سیٹ پر اتوار کو ہونے والی ووٹنگ کے بعد کانگریس امیدوار ہیمنت كٹارے الیکٹرانک ووٹر مشینوں (ای وی ایم) کا جائزہ لینے اچانک اسٹرانگ روم پہنچ گئے۔ ذرائع کے مطابق ووٹنگ کے بعد بھی مسٹر كٹارے کی طرف سے ای وی ایم میں گڑبڑی کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔ اسی کی وجہ سے وہ کل دیر رات سرکاری ایم جے ایس کالج میں بنائے گئے اسٹرانگ روم کا جائزہ لینے پہنچ گئے اور اسٹرانگ روم کے باہر پہریداری کی مانگ کی۔ انہوں نے ضلع انتظامیہ سے اسٹرانگ روم سمیت ارد گرد کے علاقے میں سی سی ٹی وی کیمرے لگانے اور اس کی ویڈیو ریکارڈنگ عام کرنے کا بھی مطالبہ کیا، جس پر ضلع الیکشن افسر اور کلکٹر وی کرن گوپال نے الیکشن کمیشن سے اجازت حاصل کرکے بندوبست کرنے کی بات کہی۔ مسٹر كٹارے کے سرکاری ایم جےایس کالج پہنچنے کے بعد کلکٹر مسٹر گوپال اور پولیس سپرنٹنڈنٹ سشانت سکسینہ بھی وہاں پہنچے تھے۔

مسٹر كٹارے نے صحافیوں سے بات چیت کے دوران الزام لگایا کہ ضلع اور پولیس انتظامیہ بی جے پی حکومت کے اشارے پر کام کر رہی ہیں۔ انتظامیہ ای وی ایم مشینوں میں بھی گڑبڑي کرا سکتی ہے۔ اسٹرانگ روم کی سخت حفاظت کا نظم نہیں کیا گیا ہے۔ ضلع انتظامیہ کے افسران پولنگ کے دن بھی حکومت کے دباؤ میں تھے اور آج بھی دباؤ میں ہیں۔ انتظامیہ سے طویل بحث کے بعد ایک درجن کانگریسی کارکنوں کو اسٹرانگ روم کے باہر 24 گھنٹے رکنے کی اجازت دی گئی ہے۔ وہیں ضلع الیکشن افسر اور کلکٹر مسٹر گوپال نے کہا کہ ای وی ایم مشینوں کو مکمل تحفظ میں رکھا گیا ہے۔ پیراملٹری فورس کی ایک کمپنی اسٹرانگ روم کی حفاظت کر رہی ہے۔ ووٹوں کی گنتی ہونے تک ای وی ایم کی مکمل حفاظت کی جائے گی۔

اٹیر سے کانگریسی امیدوار ہیمنت كٹارے ای وی ایم کا جائزہ لینے اچانک اسٹرانگ روم پہنچے

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز