مدھیہ پردیش : ریوا کی اس مسجد میں موجود ہے قرآن کریم کا ماچس کے ڈبہ سے بھی چھوٹا نسخہ

قرآن کریم کے دنیا کے موجود چھوٹے نسخوں میں سے ایک مدھیہ پردیش کے ریوا میں بھی موجود ہے۔

Jul 31, 2017 02:29 PM IST | Updated on: Jul 31, 2017 02:29 PM IST

ریوا : قرآن کریم کے دنیا کے موجود چھوٹے نسخوں میں سے ایک مدھیہ پردیش کے ریوا میں بھی موجود ہے۔ یہا ں موجود نسخہ ماچس کے ڈبہ سے بھی چھوٹا ہے۔ اس نسخہ کی لمبائی ڈھائی سینٹی میٹر، چوڑائی ڈیڑھ سینٹی میٹر اور موٹائی ایک سینٹی میٹر ہے۔ اس نسخہ میں قرآن کریم ساری آیات لکھی ہوئی ہیں۔ ریوا کی منان مسجد میں قرآن کریم کا یہ نسخہ کئی سالوں سے ثقافتی ورثہ کے طور پر سنبھال کر رکھا گیا ہے۔

قرآن کریم کے اس نسخہ کی خاص بات یہ ہے کہ لمبائی چوڑائی انتہائی کم ہونے کے باوجود اس میں سونے کے پانی سے آیتیں لکھی ہوئی ہیں۔ نسخہ کے ہی کوور میں لگے لینس کی مدد سے اس کو آسانی سے پڑھا جا سکتا ہے۔ تاہم انوار الحق کے پاس قرآن کریم کا یہ نسخہ کہاں سے آیا ، اس کی جانکاری انہیں نہیں ہے۔ مگر انہیں یہ اپنے آباو اجداد سے ملا ہے۔

مدھیہ پردیش : ریوا کی اس مسجد میں موجود ہے قرآن کریم کا ماچس کے ڈبہ سے بھی چھوٹا نسخہ

ہوشنگ آباد کے مقامی باشندے امین فلاح خان عرف امین نے بھی دعوی کیا ہے کہ ان کے پاس دنیا کا قران کریم کا سب سے چھوٹا نسخہ ہے۔ اس میں 30 پارے ہیں۔ اس کا وزن دو گرام اور لمبائی 2.5 سینٹی میٹر، موٹائی 0.5 سینٹی میٹر اور چوڑائی دو سینٹی میٹر ہے۔ وہیں جھارکھنڈ میں آنند جین کے پاس بھی اس طرح کا قرآن کریم کا ایک چھوٹا نسخہ موجود ہے۔ اس کی لمبائی 2.2 سینٹی میٹر اور چوڑائی 1.6 سینٹی میٹر ہے۔

تاہم دنیا کا قرآن کریم کا سب سے چھوٹا نسخہ پاکستان کے محمد کریم بباني کے پاس موجود ہے۔ اس کی لمبائی 1.7 سینٹی میٹر اور چوڑائی 1.28 سینٹی میٹر ہے۔ اس کا نام گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں بھی درج ہے۔

بھوپال کے قطبی اور ایس خان کے پاس بھی قرآن کریم کا چھوٹا نسخہ ہے۔ اس کی چوڑائی 2.6 سینٹی میٹر اور لمبائی 1.8 سینٹی میٹر ہے۔ عثمان آباد (مہاراشٹر) کے علیم الدین قاضی کے پاس بھی قرآن کا سب سے چھوٹے نسخوں میںسے ایک ہے۔ ان کے پاس قرآن کریم کا جو نسخہ ہے، وہ محض 2.5 سینٹی میٹر لمبی اور 0.7 سینٹی میٹر چوڑا ہے۔ سفید کاغذ پر شائع اس نسخہ کی موٹائی صرف 0.6 سینٹی میٹر ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز