رانچی میونسپل کارپوریشن میں 53 وارڈ میں 26 ریزرو، مسلم کونسلروں میں شدید ناراضگی

رانچی میونسپل کارپوریشن میں وارڈ کو ریزرو کرنے کے فیصلے سے مسلم کاؤنسلروں میں شدید ناراضگی ہے ۔

Dec 23, 2017 06:18 PM IST | Updated on: Dec 23, 2017 06:18 PM IST

 رانچی۔ حکومت کو جہاں بھی موقع مل رہا ہے، وہ مسلمانوں کی نمائندگی مختلف اداروں میں کم کرنے پر جٹی ہوئی ہے۔ یہ الزام رانچی میونسپل بورڈ کے مسلم کاؤنسلروں نے سرکار اور انتظامیہ پر لگایا ہے۔

رانچی میونسپل کارپوریشن میں وارڈ کو ریزرو کرنے کے فیصلے سے مسلم کاؤنسلروں میں شدید ناراضگی ہے ۔ رانچی میونسپل کارپوریشن علاقہ میں کل 53 وارڈوں میں26 وارڈ کو ریزرو کردیا گیا ہے ۔ ان میں ایس سی کے لئے دو، ایس ٹی کے لئے گیارہ اور پسماندہ طبقات کے لئے تیرہ وارڈ کو ریزو کیا گیا ہے۔ مسلم کاؤنسلروں کا الزام ہے کہ مسلم کثیر آبادی والے علاقوں کو خواتین کے لئے ریزرو کر دئے جانے سے مسلم مرد وارڈ کائونسلر کی تعداد ختم ہو جائے گی وہیں مسلم خاتون کاؤنسلروں کی تعداد میں بھی بیحد کمی ہوجائےگی۔

رانچی میونسپل کارپوریشن میں 53 وارڈ میں 26 ریزرو، مسلم کونسلروں میں شدید ناراضگی

فی الحال کارپوریشن میں مسلم کونسلروں کی تعداد آٹھ ہے ان میں تین مرد جبکہ پانچ خاتون شامل ہیں۔ واضح رہے کہ رانچی کے 55 وارڈ کو کم کرکے53 کردیا گیا ہے۔

Loading...

Loading...

ری کمنڈیڈ اسٹوریز