رانچی میں انجمن اسلامیہ انتخابات پر ہائی کورٹ کی روک کے بعد کہیں خوشی تو کہیں غم

Nov 06, 2017 11:14 PM IST | Updated on: Nov 06, 2017 11:14 PM IST

رانچی : انجمن اسلامیہ انتخاب تنازع کا شکار ہو گیا ہے ۔ جھارکھنڈ ہائی کورٹ کے ذریعہ انتخابات پر فوری طور پر روک لگانے کی خوشی میں جہاں ایک فریق نے 5 نومبر کے دن کو یوم انصاف کے طور پر منایا، وہیں انجمن کی موجودہ کار گذار کمیٹی کے حمایت یافتہ لوگوں نے اجلاس عام کا انعقاد کرکے غم و غصہ کا اظہار کیا۔

واضح رہے کہ موجودہ کارگذار کمیٹی کی میعاد ختم ہونے کے ایک سال بعد ہو رہے انتخابات میں بڑے پیمانہ پر بدعنوانی کے الزامات عائد کئے گئے ۔ تاہم انجمن کے موجودہ ارکان اور ان کے حامیوں اور الیکشن کنوینر ان تمام الزامات کی تردید کرتے رہے ہیں ۔ تاہم کورٹ کی روک کو مخالف جماعت اپنی فتح سے تعبیر کررہے ہیں۔ انجمن کے موجودہ ارکان سمیت شہر کے بیشتر دانشوران اور علما انجمن کے معاملہ کو عدالت کی بجائے آپسی رضامندی سے حل کرنے میں بہتری تصور کر رہے ہیں ۔ اب سب کی نگاہیں 25 نومبر کو ہونے والی سماعت پر ٹکی ہے۔

رانچی میں انجمن اسلامیہ انتخابات پر ہائی کورٹ کی روک کے بعد کہیں خوشی تو کہیں غم

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز