یروشلم تنازع : جامعہ ازہر کے بعد اب پوپ تواضروس دوم نے بھی امریکی نائب صدر سے ملاقات کردی منسوخ

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے مقبوضہ بیت المقدس سے متعلق حالیہ متنازع فیصلے کے بعد مصر کے قبطی چرچ کے روحانی پیشوا پوپ تواضروس دوم نے بھی احتجاج کے طور پر امریکی نائب صدر مائیک پینس سے قاہرہ میں ان کے دورے کے موقع پر ملاقات نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے

Dec 10, 2017 09:55 PM IST | Updated on: Dec 10, 2017 09:55 PM IST

قاہرہ : امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے مقبوضہ بیت المقدس سے متعلق حالیہ متنازع فیصلے کے بعد مصر کے قبطی چرچ کے روحانی پیشوا پوپ تواضروس دوم نے بھی احتجاج کے طور پر امریکی نائب صدر مائیک پینس سے قاہرہ میں ان کے دورے کے موقع پر ملاقات نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔قبطی چرچ نے ہفتے کے روز ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکی صدر نے بتی المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرتے وقت لاکھوں عرب عوام کے احساسات اور امنگوں کا خیال نہیں کیا ہے۔

چرچ کا کہنا ہے کہ اس صورت حال کے پیش نظر پینس کا ان کے دورہ مصر کے موقع پر استقبال نہیں کیا جائے گا۔مائیک پینس دسمبر کے دوسرے پندرھواڑے میں کرسمس سے قبل مصر اور اسرائیل کے دورے پر آنے والے ہیں۔ان کا یہ دورہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے یروشیلم کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینے کے فیصلے کے بعد زیادہ اہمیت اختیار کر گیا ہے۔

یروشلم تنازع : جامعہ ازہر کے بعد اب پوپ تواضروس دوم نے بھی امریکی نائب صدر سے ملاقات کردی منسوخ

اس سے پہلے شیخ الازھر نے بھی ٹرمپ کے فلسطین مخالف اعلان پر احتجاج کرتے ہوئے امریکہ کے نائب صدر مائک پینس کے ساتھ ملاقات کا پروگرام منسوخ کردیا تھا۔ادھر الازھر کے وکیل عباس شومان نے پوری دنیا کے مسلمانوں اور عیسائیوں سے اپیل کی ہے کہ وہ امریکی اور اسرائیلی مصنوعات کا بائیکاٹ کرکے، ٹرمپ کے فلسطین مخالف فیصلے کے خلاف احتجاج کریں۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز