جس کرکٹر کی وجہ سے نیوزی لینڈ نے گنوایا ورلڈ چمپئن کا خطاب ، اب اسی کو دے گا یہ بڑا ایوارڈ

نیوزی لینڈ آف دی ائیر ایوارڈ کے چیف جج کیمران بینٹ کے مطابق بین اسٹوکس بھلے ہی انگلینڈ کیلئے کھیلتے ہوں ، لیکن یہاں لوگ انہیں نیوزی لینڈ کا ہی مانتے ہیں ۔

Jul 21, 2019 09:35 AM IST | Updated on: Jul 21, 2019 09:37 AM IST
جس کرکٹر کی وجہ سے نیوزی لینڈ نے گنوایا ورلڈ چمپئن کا خطاب ، اب اسی کو دے گا یہ بڑا ایوارڈ

جس کرکٹر کی وجہ سے نیوزی لینڈ نے گنوایا خطاب ، اسی کو دے گا یہ بڑا ایوارڈ

اس مرتبہ ورلڈ کپ کے فائنل میں بین اسٹوکس انگلینڈ کیلئے سب سے بڑے ہیرو ثابت ہوئے ۔ انہیں کی بدولت انگلینڈ پہلی مرتبہ ورلڈ چمپئن بننے میں کامیاب رہا جبکہ نیوزی لینڈ کے حامی انہیں ویلین مانتے ہیں ۔ لیکن اب نیوزی لینڈ میں ہی انہیں ایک بڑا ایوارڈ مل سکتا ہے ۔ دراصل بین اسٹوکس کو نیوزی لینڈ آف دی ائیر ایوارڈ کیلئے نامزد کیا گیا ہے ۔

نیوزی لینڈ آف دی ائیر ایوارڈ کے چیف جج کیمران بینٹ کے مطابق بین اسٹوکس بھلے ہی انگلینڈ کیلئے کھیلتے ہوں ، لیکن یہاں لوگ انہیں نیوزی لینڈ کا ہی مانتے ہیں ۔ 10 کھلاڑیوں کو اس اعزاز کیلئے نامزد کیا گیا ہے ، جن میں بین اسٹوکس کے علاوہ نیوزی لینڈ کی ٹیم کے کپتان کین ولیمسن بھی شامل ہیں ۔ دسمبر میں انہیں ایوارڈ دیا جائے گا ۔

Loading...

خیال رہے کہ بین اسٹوکس کی پیدائش نیوزی لینڈ کے کرائسٹ چرچ میں ہوئی تھی ۔ 12 سال کی عمر میں وہ انگلینڈ آگئے تھے ۔ دراصل ان کے والد گیرالڈ رگبی لیگ کھیلتے تھے ، بعد میں وہ کوچنگ کیلئے انگلینڈ آگئے ۔ ان کے والدین تو واپس نیوزی لینڈ لوٹ گئے ، لیکن بین اسٹوکس انگلینڈ میں ہی رہ گئے ۔

آل راونڈر بین اسٹوکس نے ورلڈ کپ کے فائنل میچ میں نیوزی لینڈ کے خلاف 84 رنوں کی شاندار اننگز کھیل کر انگلینڈ کو چمپئن بنادیا ۔ انہوں نے پہلے میچ کو برابری پر ختم کروایا اور پھر سپر اوور میں بھی وہ بلے بازی سے ہیرو رہے ۔ اسٹوکس نے بہترین بازی کرتے ہوئے ٹورنامنٹ میں مجموعی طور پر 66.42 کی اوسط سے 465 رن بنائے ۔ اس کے علاوہ اسٹوکس نے ٹورنامنٹ میں سات وکٹ بھی جھٹکے ۔

Loading...