shikhar dhawan batsman of delhi capital star taunts r ashwin with dance moves after mankad attempt ns– News18 Urdu

اشون کی 'وارننگ' کا شکھردھون نے یوں دیا جواب، پھراسٹیڈیم میں مچنے لگا شور، ویڈیو وائرل

کنگس الیون پنجاب نے اپنے تیسرے اوراننگ کے 13 ویں اوورکی تیسری گیند ڈالی تونان اسٹرائیکراینڈ پرموجود شکھردھون ڈانس کرنے لگے۔

Apr 21, 2019 12:33 PM IST | Updated on: Apr 21, 2019 12:43 PM IST

کنگس الیون پنجاب کےکپتان آراشون نےآئی پی ایل 12 میں بے شک اب تک 10 میچ کھیلتے ہوئے 26.72 کی اوسط سے 11 وکٹ حاصل کئے ہوں، لیکن ان سے ہربلے بازخوفزدہ ہے۔ سچ کہا جائےتوراجستھان رائلس کےخلاف جوس بٹلرکومانکڈنگ کرنےکےبعد بلے بازاب ان کی گیند بازی کے دوران کافی محتاط نظرآتے ہیں۔

ایسا ہی نظارہ ہفتہ کو دہلی کے فیروزشاہ کوٹلہ میدان میں دہلی کیپٹلس اورپنجاب کے میچ میں دیکھنے کوملا۔ دراصل اننگ کے13 ویں اوورمیں پنجاب کےکپتان آراشون نے دہلی کے اسٹاربلے بازشکھردھون کومانکڈنگ کرنے کی وارننگ دینے کا اشارہ کیا۔ حالانکہ نان اسٹرائیکربلےبازاینڈ پرموجود دھون کریزکے پاس ہی تھے، لہٰذا انہوں نے جلدی سے بلا رکھ دیا۔

اشون کی 'وارننگ' کا شکھردھون نے یوں دیا جواب، پھراسٹیڈیم میں مچنے لگا شور، ویڈیو وائرل

اشون کی 'وارننگ' کا شکھردھون نے یوں دیا جواب، پھرکوٹلہ میں مچنےلگا شور۔ تصویر: ٹوئٹر

اس کے بعد انہوں نے بیٹھ کرپیرکی موومنٹ دکھائی۔ وہیں اشون اگلی گیند پھینکنے کےلئے رن اپ پرلوٹ گئے۔ پھرجوہوا وہ ہرکسی کےلئےتفریح کرنے والا لمحہ بن گیا، جب اشون نے اپنےتیسرے اوراننگ کی 13 ویں اوورکی تیسری گیند ڈالی تونان اسٹرائیکراینڈ پرموجود شکھردھون ڈانس کرنے لگے۔ یہ واقعہ اسکرین پرلوگوں نے رپلے میں دیکھا توہنسی نہیں روک پائے اورایسا ہی کچھ حال شکھردھون کا تھا۔ وہیں دھون کے جواب کا دہلی کے شائقین نے شورمچاکرحمایت کی۔

موجودہ سیزن میں25 مارچ کوجے پورکےسوائی مان سنگھ اسٹیڈیم میں راجستھان رائلس اور کنگس الیون پنجاب کےدرمیان مقابلہ ہوا۔ اس دوران ایک حیران کردینے والا واقعہ دیکھنے کوملا۔ پنجاب کے کپتان اوراسٹاراسپنرآراشون نے بغیرگیند پھینکے ہی نان اسٹرائیکراینڈ پر کھڑے جوس بٹلرکورن آوٹ کرکے مانکڈنگ تنازعہ کو ہوا دے دی۔ انہوں نے آوٹ کرنے سے قبل جوس بٹلرکووارننگ بھی نہیں دی تھی۔ اس کے بعد آئی پی ایل میں مانکڈنگ اور اشون کولےکرخوب ہنگامہ مچ گیا۔

اس دوران نہ صرف ہندوستانی بلکہ دنیا بھرکےعظیم کرکٹروں نے اس کولےناراضگی ظاہر کی۔ جبکہ کرکٹ ضابطہ بنانے والی میرلبون کرکٹ کلب (ایم سی سی) نے اشون کی اس حرکت کوکھیل جذبے کے خلاف بتایا تھا۔ حالانکہ اس دوران اشون نے ہربارخود کوصحیح بتایا اورانہیں کئی کھلاڑیوں کی حمایت بھی ملی۔