cricket match virat kohlis dream broken as captain will not win world cup ever snm !ٹوٹ گیا وراٹ کوہلی کا خواب، اپنی کپتانی میں اب کبھی نہیں جیت پائیں گے ورلڈ کپ– News18 Urdu

!ٹوٹ گیا وراٹ کوہلی کا خواب، اپنی کپتانی میں اب کبھی نہیں جیت پائیں گے ورلڈ کپ

دنیا کے سب سے بہترین کھلاڑیوں میں شمار وراٹ کیلئے بلے باز ہی نہیں کپتان کے طور پر بھی خود کو ثابت کرنے کا بڑا موقع تھا۔ حالانکہ وہ نیوزی لینڈ کے خلاف سیمی فائنل میچ میں محض 1 رن بناکر آؤٹ ہو گئے۔

Jul 11, 2019 02:04 PM IST | Updated on: Jul 11, 2019 02:42 PM IST

انٹرنیشنل کرکٹ میں سنچری کی جھڑی لگانے والے ٹیم انڈیا کے کپتان وراٹ کوہلی کیلئے آئی سی سی ورلڈ کپ 2019 کا سفر شانداررہا۔ حالانکہ وہ پاکستان کے خلاف چیمپئن ٹرافی 2017 کے فائنل کی ہی طرح نیوزی لینڈ کے خلاف سیمی فائنل میں چوک گئے۔ اب تک نہ تو وراٹ کی کپتانی کا جادو آئی پی ایل ٹورنامنٹ میں چلا ہے اور نہ ہی کسی گلوبل کرکٹ ٹورنامنٹ میں ان کا دم خم نظرآیا ہے۔

آئی پی ایل میں بھی اب تک ٹیم کونہیں بنا پائے چیمپئن: آئی پی ایل میں بھی کوہلی اب تک رائل چیلنجرس کو چیمپئن نہیں بنا پائے ہیں۔ اب عالمی کپ میں بھی ان پر لگا چوکرس کا ٹھپہ ہٹنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ ورلڈ کپ ٹورنامنٹ میں موجودہ دور میں دنیا کے سب سے بہترین کھلاڑیوں میں شمار وراٹ کیلئے بلے باز ہی نہیں کپتان کے طور پر بھی خود کو ثابت کرنے کا بڑا موقع تھا۔ حالانکہ وہ نیوزی لینڈ کے خلاف سیمی فائنل میچ میں محض 1 رن بناکر آؤٹ ہو گئے۔ وہ ورلڈ کپ 2015 سیمی فائنل میچ میں بھی آسٹریلیا کے خلاف 1 رن بناکر آؤٹ ہوئے تھے۔

!ٹوٹ گیا وراٹ کوہلی کا خواب، اپنی کپتانی میں اب کبھی نہیں جیت پائیں گے ورلڈ کپ

اب تک نہ تو وراٹ کی کپتانی کا جادو آئی پی ایل ٹورنامنٹ میں چلا ہے اور نہ ہی کسی گلوبل کرکٹ ٹورنامنٹ میں ان کا دم نظرآیا۔۔

टूट गया विराट कोहली का सपना, अपनी कप्तानी में अब कभी नहीं जीत पाएंगे वर्ल्ड कप!

Loading...

فینس کی امیدوں پر کھرے نہیں اتر پائے ٹیم انڈیا کے کپتان: 2017 میں کوہلی نے انگلینڈ میں کھیلے گئے منی ورلڈ کپ یعنی چیمپئن ٹرافی میں ہندستان کو ٹورنامنٹ کے فائنل تک پہنچایا تھا۔ تب فینس کو امید تھی کہ ہندستان کو چیمپئن ٹرافی 2017 کا نائب ونر بنانے والے کوہلی اس بار ٹیم انڈیا کو ورلڈ کپ جتوا دیں گے۔ حالانکہ ہوا اس کے برعکس۔ ان کا بلہ بڑے میچ میں خاموش رہا اور ٹیم انڈیا عالمی کپ سے باہر ہوگئی۔

وراٹ ورلڈ کپ کے ناک آؤٹ میچوں میں 12.16 کی اوسط سے محض 73 رن ہی بنا پائے ہیں۔ اس دوران ان کا اسٹرائک ریٹ 56.15 کا رہا ہے۔ جو بیحد شرمناک ہے۔

Loading...