شرمناک! والد کے پاس سو رہی 5 سالہ بچی کا اغوا، ریپ کے بعد درندے نے کیا قتل– News18 Urdu

شرمناک! والد کے پاس سو رہی 5 سالہ بچی کا اغوا، ریپ کے بعد درندے نے کیا قتل

اجین میں پانچ سالہ معصوم بچی کا اغوا کر کے اس کی عصمت دری کی گئی اور پھر اسے قتل کر دیا گیا۔

Jun 08, 2019 11:08 AM IST | Updated on: Jun 08, 2019 11:08 AM IST

مدھیہ پردیش کے اجین میں انسانیت کو شرمسار کر دینے والا واقعہ سامنے آیا ہے۔ اجین میں پانچ سالہ معصوم بچی کا اغوا کر کے اس کی عصمت دری کی گئی اور پھر اسے قتل کر دیا گیا۔ یہ شرمناک واقعہ لال پل۔ بھوکھی ماتا روڈ کنارے واقع اینٹ بھٹے پر کام کرنے والے مزدور کی بیٹی کے ساتھ ہوا ہے۔

معصوم کے والد کا کہنا ہے کہ جمعہ کی رات ان کی بچی ان کے پاس ہی ساتھ میں سو رہی تھی۔ رات تقریبا دو بجے جب آنکھ کھلی تو بچی غائب تھی۔ اس کے بعد کنبہ کے سبھی ارکان بچی کو تلاش کرنے لگے۔ رات بھر تلاش کرنے کے بعد جب بچی نہیں ملی تو صبح انہوں نے پولیس کو اس کی اطلاع دی۔ پولیس نے نامعلوم ملزم کے خلاف معاملہ درج کر کے بچی کی تلاش شروع کر دی جس کے بعد جمعہ کو دوپہر میں بچی کی لاش لال پل کے پاس شپرا ندی میں ملی۔

شرمناک! والد کے پاس سو رہی 5 سالہ بچی کا اغوا، ریپ کے بعد درندے نے کیا قتل

علامتی تصویر

Loading...

جائے حادثہ پر پہنچی پولیس نے پایا کہ بچی کے جسم پر کپڑے نہیں تھے۔ اس کے سر پر سنگین چوٹ کے چار نشان تھے۔ لاش کو قبضہ میں لینے کے بعد پولیس نے شام کو اس کا پوسٹ مارٹم کرایا۔

پوسٹ مارٹم رپورٹ ابھی نہیں آئی ہے لیکن ڈاکٹروں نے بچی کے ساتھ ریپ کی بات کہی ہے۔ پولیس اینٹ بھٹے پر کام کرنے والوں سے پوچھ گچھ کر رہی ہے تاکہ ملزم کا سراغ مل سکے۔