miscreant posts intimate pictures on social media after rape بہلا پھسلا کر لے گیا گھر ، زبردستی مانگ میں بھرا سندور اور کی آبروریزی ، پھر سوشل میڈیا پر پوسٹ کردی قابل اعتراض تصویریں– News18 Urdu

بہلا پھسلا کر لے گیا گھر ، زبردستی مانگ میں بھرا سندور اور کی آبروریزی ، پھر سوشل میڈیا پر پوسٹ کردی قابل اعتراض تصویریں

بہار کے جہان آباد میں ایک لڑکی کی آبروریزی اور اس کی قابل اعتراض تصویریں سوشل میڈیا پر وائرل کرنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔

Aug 20, 2018 05:02 PM IST | Updated on: Aug 20, 2018 05:02 PM IST

بہار کے جہان آباد میں ایک لڑکی کی آبروریزی اور اس کی قابل اعتراض تصویریں سوشل میڈیا پر وائرل کرنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ جہان آباد کے ارکی گاوں مں پیش آئے اس واقعہ کی پولیس جانچ کررہی ہے ۔ اس سلسلہ میں متاثرہ نے خاتون تھانہ میں گاوں کے ایک ہی نوجوان وید پرکاش عرف بہادر کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی ہے ۔

متاثرہ کا الزام ہے کہ وہ اپنے نانا کے یہاں میں رہ کر تعلیم حاصل کرتی ہے ، ملزم اس کے نانا کے گھر کے نزدیک کا ہی ہے ۔ دو ماہ قبل اسے بہلا پھسلا کر وہ اپنے گھر لے گیا اور زبردستی اس کی مانگ میں سندور بھر کر اس کی آبروریزی کی ۔

بہلا پھسلا کر لے گیا گھر ، زبردستی مانگ میں بھرا سندور اور کی آبروریزی ، پھر سوشل میڈیا پر پوسٹ کردی قابل اعتراض تصویریں

علامتی تصویر

اس دوران نواجون نے متاثرہ لڑکی کی قابل اعتراض تصاویر بھی کھینچ لیں ۔ ایک دن پہلے ملزم نوجوان نے پھر سے جسمانی تعلقات قائم کرنے کی کوشش کی ، مگر لڑکی نے انکار کردیا ، جس کے بعد اس نے پہلے سے کھینچی گئی قابل اعتراض تصاویر فیس بک اور وہاٹس ایپ پر وائرل کردی ۔ سوشل میڈیا پر تصویریں وائرل ہونے کے بعد اس کی اطلاع لڑکی کے اہل خانہ کو ہوئی ۔

معاملہ کے سامنے آنے کے بعد پولیس نے واقعہ کی جانچ شروع کردی ہے ۔ خاتون تھانہ کی پولیس نے صدر اسپتال میں متاثرہ لڑکی کا میڈیکل جانچ کرایا ہے ۔ ایس ڈی پی او نے بتایا کہ ملزموں کی گرفتاری کیلئے اس کے ممکنہ ٹھکانوں پر دبش دی جارہی ہے ۔

Loading...