چھٹی کلاس کی طالبہ کے پیٹ میں اٹھا درد، 5 ماہ کی حاملہ نکلی بچی، معاملہ جان کراڑجائیں گے ہوش– News18 Urdu

چھٹی کلاس کی طالبہ کے پیٹ میں اٹھا درد، 5 ماہ کی حاملہ نکلی بچی، معاملہ جان کراڑجائیں گے ہوش

بتادیں کہ بچی کی ماں کے پوچھنے پر معصوم نے بتایا کہ ملزم دسمبر 2018 سے اس کا ریپ کررہا ہے۔ ملزم کوئی اور نہیں بلکہ محلے کا رہنے والا 45 سالہ شخص ہے۔ ملزم کا نام شیوراج یادو ہے۔۔

Jun 21, 2019 11:34 AM IST | Updated on: Jun 21, 2019 11:55 AM IST

مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال سے ایک ایک ہوش اڑا دینے والا معاملہ سامنے آیا ہے۔ یہاں ایک 45 سال کے ادھیڑ عمرپر کلاس 6 کی معصوم کے ساتھ درندگی کرنے کا الزام لگا ہے۔ معاملہ ٹی ٹی نگر تھانہ علاقے کا ہے۔ الزام ہے کہ اس ادھیڑ عمر کے شخص نے 6 ماہ پہلے معصوم کو پہلی مرتبہ حوس کا شکار بنایا تھا۔۔

جانکاری کے مطابق جمعرات کو بچی کے پیٹ میں اچانک درد اٹھا۔ اس کے بعد گھر والے بچی کو اسپتال لیکر پہنچے۔ جب چیک اپ ہوا تو پتہ چلا کہ وہ 5 ماہ سے حاملہ ہے۔ یہ بات سنتے ہی اہل خانہ کے پاؤں تلے زمین کھسک گئی۔۔ اس کے بعد گھبرائے گھر والے تھانہ پہنچے اور شکایت درج کرائی۔

چھٹی کلاس کی طالبہ کے پیٹ میں اٹھا درد، 5 ماہ کی حاملہ نکلی بچی، معاملہ جان کراڑجائیں گے ہوش

معاملہ درج کرنے کے بعد ٹی ٹی نگر پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔ ایس ایس پی اکھل پٹیل کے مطابق علاقے میں رہنے والی 13 سالہ معصوم  کے پیٹ میں درد جمعرات کی صبح اچانک تیز درد اٹھا۔ گھر والے اسے ڈاکٹر کے پاس لیکر گئے تو جانچ میں معلوم چلا کہ بچی 5ماہ سے حاملہ ہے۔

بتادیں کہ بچی کی ماں کے پوچھنے پر معصوم نے بتایا کہ ملزم دسمبر 2018 سے اس کا ریپ کررہا ہے۔ ملزم کوئی اور نہیں بلکہ محلے کا رہنے والا 45 سالہ شخص ہے۔ ملزم کا نام شیوراج یادو ہے۔

پولیس سے کی گئی شکایت میں بتایاکہ ملزم اپنے تین بیٹوں ایک بہو اور بیوی کے ساتھ رہتا ہے۔ ملزم مون پھلی کا ٹھیلا لگاتا ہے۔ جب ملزم کے گھر والے باہر ہوتے تھے تو وہ بچی کو لے جاکر یہ شرمناک حرکت کرتا تھا۔۔ بچی کو پہلی مرتبہ دسمبر 2018 میں مونگ پھلی دینے کے بہانے گھر میں بلایا اور ا س کے ساتھ  اس گھٹیا حرکت کو انجام دیا۔۔۔  اس دوران ملزم نے بچی کو ڈرایا دھمکایا اورکسی کو بتانے پر جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔۔۔

Loading...