امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے پورن اسٹار کو اپنی جیب سے دئے تھے 80 لاکھ روپے

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے نجی وکیل نے کہا ہے کہ سال 2006 میں مبینہ طور سے ٹرمپ کے ساتھ جنسی تعلقات قائم کرنے والی پورن اسٹار کو انہوں نے اپنی جیب سے 130000 ڈالر یعنی تقریبا 80 لاکھ روپے ادا کئے تھے۔

Feb 14, 2018 02:46 PM IST | Updated on: Feb 14, 2018 02:46 PM IST

نیویارک : امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے نجی وکیل نے کہا ہے کہ سال 2006 میں مبینہ طور سے ٹرمپ کے ساتھ جنسی تعلقات قائم کرنے والی پورن اسٹار کو انہوں نے اپنی جیب سے 130000 ڈالر یعنی تقریبا 80 لاکھ روپے ادا کئے تھے۔ ٹرمپ کے نجی وکیل مائیکل کوہین نے دی نیویارک ٹائمس کو بتایا کہ انہیں اسٹارمی ڈینیلس کو ادائیگی کرنے کیلے ٹرمپ آرگنائزیشن یا ٹرمپ کی تشہیری مہم سے کوئی رقم نہیں دی گئی تھی ۔

کوہین نے کہا کہ مس کلیفورڈ کو کی گئی ادائیگی قانونی تھی اور یہ مہم یا کسی شخص کے ذریعہ مہم پر کئے گئے خرچ سے نہیں لیا گیا تھا ۔ خیال رہے کہ ڈینیلس کا اصلی نام اسٹیفنی کلیفورڈ ہے ۔ دی وال اسٹریٹ جرنل نے گزشتہ ماہ ایک خبر میں کہا تھا کہ کوہین نے اکتوبر 2016 میں صدارتی انتخابات کیلئے تشہیری مہم کے دوران ٹرمپ کے ساتھ مبینہ طور پر جنسی تعلقات کی بات اجاگر نہ کرنے عوض میں 130000 ڈالر لئے تھے۔

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے پورن اسٹار کو اپنی جیب سے دئے تھے 80 لاکھ روپے

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ ۔ فائل فوٹو

ادھر ہالی ووڈ لائف نے بھی پورن اسٹار اسٹارمی ڈینیلس کے حوالے سے ایک اسٹوری شائع کی تھی ۔ اس میں کہا گیا تھا کہ ڈونالڈ ٹرمپ اور ان کی ملاقات 2006 کے ایک گولف ٹورنامنٹ کے دوران ہوئی تھی ۔ ڈینیلس نے کہا کہ ان کا اور ٹرمپ کا طویل عرصہ تک معاشقہ رہا ۔ یہ اس وقت کی بات ہے جب ٹرمپ کی اہلیہ میلانیا نے بیٹے کو جنم دیا تھا ۔ اس وقت بیٹے کی عمر محض چار ماہ تھی ۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز