ایران میں زلزلہ کے متعدد جھٹکے، 18 افراد زخمی، خوف و ہراس کا ماحول

Dec 13, 2017 08:48 AM IST | Updated on: Dec 13, 2017 08:48 AM IST

بیروت۔  ایران کے جنوب مشرقی صوبے كرمان میں کل اور آج زلزلے کے کئی بار جھٹکے محسوس کئے گئے۔ زلزلے میں 18 افراد زخمی ہو گئے اور تقریبا 20 گھر تباہ ہوگئے۔

آٹھ لاکھ 20 ہزار سے زائد کی آبادی والے كرمان سے 56 کلومیٹر دور علاقے میں کل پہلی بار 5.9 شدت والے زلزلے کے جھٹکے محسوس کئے گئے۔ اگرچہ شروع میں زلزلے کی شدت 6.2 ہونے کی بات کہی گئی تھی۔ اس کے بعد کئی ہلکے جھٹکے محسوس کئے گئے۔

ایران میں زلزلہ کے متعدد جھٹکے، 18 افراد زخمی، خوف و ہراس کا ماحول

آج علی الصبح بھی اسی علاقے میں 6.0 شدت والے زلزلے کے زوردار جھٹکے محسوس کئے گئے۔: فائل فوٹو۔

آج علی الصبح بھی اسی علاقے میں 6.0 شدت والے زلزلے کے زوردار جھٹکے محسوس کئے گئے۔ امریکی جیولوجیکل سروے (یو ایس جی ایس ) کے مطابق ایک بجے کے بعد آئے سب تیز زلزلہ کا مرکز كرمان سے 64 کلومیٹر شمال میں محض دس کلومیٹر کی گہرائی میں واقع تھا۔ تازہ زلزلے کی وجہ سے ہوئے جان و مال کے نقصان کے بارے میں ابھی تک کچھ پتہ نہیں چل سکا ہے۔. لوگوں کے سونے کا وقت ہونے اور اندھیرا ہونے کی وجہ سے بھی زلزلے سے نقصان کا پتہ نہیں چل رہا ہے۔

سرکاری میڈیا نے اس سے پہلے خبر دی تھی کہ کل صبح آنے والے زلزلے میں کسی کی موت نہیں ہوئی لیکن 18 افراد زخمی ہو گئے۔ سرکاری میڈیا کی جانب سے پوسٹ تصاویر میں زلزلے سے متاثر علاقے میں عمارتوں کے گرنے کے خوف سے سڑکوں پر كھڑے لوگوں کے گروپ دیکھے جا سکتے ہیں۔ میڈیا کے مطابق 20 خراب عمارتوں میں سے زیادہ تر پرانے تھے۔ تصاویر میں نقصان زدہ دیواریں بھی دکھائی دے رہی ہیں۔

گزشتہ پیر کو بھی مغربی ایران کے اسی علاقے میں زلزلے کے زوردار جھٹکے محسوس کئے گئے تھے۔ سرکاری میڈیا نے ریکٹر اسکیل پر اس کی شدت چھ کا دعوی کیا جبکہ یو ایس جی ایس نے اس کی شدت ریکٹر اسکیل پر 5.4 ہونے کی بات کہی. اگرچہ اس واقعہ میں کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ ماہ ایران کے اسی علاقے میں7.3کی شدت والا زلزلہ آیا تھا جس میں کم از کم 530 افراد ہلاک اور ہزاروں زخمی ہوئے تھے۔

صدر حسن روحانی کے کٹر مخالفین نے گزشتہ ماہ آنے والے زلزلے کے دوران سرکاری رویہ کی تیکھی تنقید کرتے ہوئے اسے انتہائی سست اور ناکافی بتایا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز