مغربی بنگال میں صورتحال انتہائی بھیانک ، کچھ لوگ اس کو مزید ہوا دے رہے ہیں : امرتیہ سین

Jul 10, 2017 06:49 PM IST | Updated on: Jul 10, 2017 06:49 PM IST

کلکتہ : نوبل انعام یافتہ امرتیہ سین نے مغربی بنگال میں فرقہ وارانہ فسادات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بنگال میں جو صورت حال رونما ہورہی ہے وہ بہت ہی بھیانک ہے۔جب کہ بنگال فرقہ وارانہ یکجہتی کا ہمیشہ سے گہوارہ رہا ہے ۔

شمالی 24پرگنہ کے بشیر ہاٹ سب ڈویژن مختلف علاقوں میں فیس بک پر متنازع پوسٹ کے بعد ہوئے فرقہ وارانہ تشدد پر تبصرہ کرتے ہوئے پروفیسر امرتیہ سین نے کہا کہ بنگال میں کیا ہورہاہے ؟ یہ اس لیے ہورہا ہے کہ کچھ لوگ یہ حالات پیدا کررہے ہیں ۔اس لیے اس پر خوف زدہ ہونے کی ضرورت ہے۔

مغربی بنگال میں صورتحال انتہائی بھیانک ، کچھ لوگ اس کو مزید ہوا دے رہے ہیں : امرتیہ سین

گیٹی امیجیز

ان کی شخصیت پر بنی ڈیکومنٹری کی اسکریننگ پروگرام میں شرکت کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے امرتیہ سین نے کہا کہ بنگال میں فرقہ واریت کے واقعات اس لیے رونماہورہے ہیں کیوں کہ کوئی انہیں ہوا دے رہا ہے ۔سین نے کہاکہ بنگال ہمیشہ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کا گہوارہ رہا ہے ۔یہاں امن کے ساتھ ہندو مسلم ساتھ میں رہتے رہے ہیں ۔ہمیں یہ سمجھ میں نہیں آرہا ہے کہ یہ کیسے رونما ہوا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز