آسام، بہار اور بنگال میں سیلاب کا قہر، مرنے والوں کی تعداد میں اضافہ ہوا

آسام، بہار اور مغربی بنگال میں سیلاب کے حالات میں کوئی بہتری نہیں ہوئی۔ وہاں سے اور لوگوں کی موت کی خبریں آئیں۔

Aug 17, 2017 08:25 AM IST | Updated on: Aug 17, 2017 08:25 AM IST

نئی دہلی۔ آسام، بہار اور مغربی بنگال میں سیلاب کے حالات میں کوئی بہتری نہیں ہوئی۔ وہاں سے اور لوگوں کی موت کی خبریں آئیں۔ آسام میں 11 اور لوگوں کی موت ہوئی جس سے اموات کی تعداد 39 ہو گئی۔ ریاست کے کل 32 اضلاع میں سے 24 میں تقریبا 33.45 لاکھ لوگ متاثر ہوئے ہیں۔ بہار میں اب تک 72 لوگوں کی موت ہو جانے کے ساتھ سیلاب سے 14 اضلاع کی 73.44 لاکھ آبادی متاثر ہوئی ہے۔

محکمہ آفات مینجمنٹ کے خصوصی سیکرٹری انیرودھ کمار نے بتایا کہ سیلاب سے متاثرہ ریاست کے 14 اضلاع کشن گنج، ارریہ، پورنیہ، کٹیہار، مشرقی چمپارن، مغربی چمپارن، دربھنگہ، مدھوبنی، مظفر پور، سیتامڑھی، شیوہر، گوپال گنج، سپول اور مدھے پورا میں سب سے زیادہ 20 افراد ارریہ میں، سیتامڑھی میں 11، مغربی چمپارن میں 9، کشن گنج میں 8، مدھوبنی اور پورنیہ میں 5-5، مدھے پورا اور دربھنگہ میں 4-4، مشرقی چمپارن میں 3، شیوہر 2 اور سپول میں ایک شخص کی موت ہوئی ہے۔

آسام، بہار اور بنگال میں سیلاب کا قہر، مرنے والوں کی تعداد میں اضافہ ہوا

Loading...

انہوں نے بتایا کہ سیلاب کی وجہ سے ان 14 اضلاع کے 110 ڈویژن اور 1151 پنچایت علاقے متاثر ہوئے ہیں اور کل 73.44 لاکھ آبادی متاثر ہوئی ہے۔

ریاستی حکومت کی طرف سے سیلاب میں گھرے لوگوں کو محفوظ نکالے جانے کا کام جنگی سطح پر کیا جا رہا ہے۔ اب تک 2.74 لاکھ لوگوں کو سیلاب سے متاثرہ علاقے سے محفوظ مقام پر پہنچایا گیا ہے اور 504 ریلیف کیمپوں میں 1.16 لاکھ شخص پناہ لئے ہوئے ہیں۔

وزیر اعلی نتیش کمار، نائب وزیر اعلی سشیل کمار مودی کے ساتھ سیلاب سے متاثرہ بیتیا اور والميكی نگر کا ہوائی سروے کرنے والے تھے، لیکن خراب موسم کی وجہ سے وہ پرواز نہیں کر سکے۔ وہ سیلاب کی صورتحال اور سیلاب متاثرین کے لئے چلائے جا رہے ریلیف اور ریسکیو کاموں کی نگرانی اور اس کے بارے میں اعلی حکام سے معلومات حاصل کرنے کے ساتھ ضروری ہدایات دیتے رہے۔

وہیں، مغربی بنگال آفات کی روک تھام کے محکمہ کے ایک سینئر افسر نے بتایا کہ ریاست میں سیلاب سے کم از کم 32 لوگوں کی موت ہو گئی اور 14 لاکھ سے زائد افراد متاثر ہوئے ہیں۔ ادھر، ریاست کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے کہا کہ سیلاب سے متاثرہ لوگوں کو راحت پہنچانا ان کی حکومت کی پہلی ترجیح ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز