اب لالو کی بیٹی میسا کے ٹھکانوں پر ای ڈی کا چھاپہ ، گمنام پراپرٹی کی جانچ کیلئے پہنچی ٹیم

Jul 08, 2017 10:17 AM IST | Updated on: Jul 08, 2017 02:18 PM IST

نئی دہلی۔  انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے گمنام پراپرٹی اور کالے دھن کو سفید کرنے کے معاملے میں آج راشٹریہ جنتا دل کے سربراہ لالو پرساد یادو کی بیٹی میسا بھارتی کے جنوبی دہلی میں واقع فارم ہاؤسوں پر چھاپے مارے اور ان سے پوچھ گچھ کی۔ ای ڈی نے آج صبح صبح دہلی کے مہرولی علاقے میں محترمہ بھارتی کے فارم ہاؤس پر چھاپہ مارنے کی کارروائی کی۔ یہ فارم ہاؤس گھٹورني میٹرو اسٹیشن سے محض 100 میٹر کے فاصلے پر ہے۔ جس وقت ڈائریکٹوریٹ کی ٹیم وہاں پہنچی اس وقت محترمہ بھارتی اور ان کے شوہر شیلیش کمار وہیں موجود تھے۔ اس کے علاوہ بجواسن اور فوجی فارم علاقوں میں بھی ان کی خصوصیات پر ای ڈی کے ٹیم نے چھاپے مارے ہیں۔

اس سے پہلے جمعہ کو مرکزی تفتیشی بیورو نے مسٹر یادو کے پٹنہ، دہلی اور گڑگاؤں سمیت کل 12 مقامات پر ان کے اور ان کے خاندان کے املاک پر چھاپے مارے تھے۔ گمنام پراپرٹی اور کالے دھن کو سفید بنانے کے معاملے میں یہ کارروائی کی گئی ہے۔ الزام ہے کہ مسٹر یادو اور ان کے خاندان نے کاغذی کمپنیاں بنا کر آٹھ ہزار کروڑ روپے کے کالے دھن کو سفید کیا ہے۔ اس سلسلے میں ملک بھر میں بہت سے لوگوں اور ٹھکانوں پر چھاپہ مارے گئے ہیں۔

اب لالو کی بیٹی میسا کے ٹھکانوں پر ای ڈی کا چھاپہ ، گمنام پراپرٹی کی جانچ کیلئے پہنچی ٹیم

ان کمپنیوں میں ایک مشال پےكرس اینڈ پرنٹر کے نام سے ہے ،جس کی ڈائریکٹر محترمہ بھارتی اور ان کے داماد ہیں۔

الزام ہے کہ اس کمپنی نے چار اور کاغذی کمپنیوں سے کالا دھن لے کر اسےسفید کیا ہے اور ان پیسوں سے دہلی میں کئی فارم ہاؤس خریدے گئے ہیں۔ ای ڈی ان میں سے کچھ کمپنیوں کے مالکان جین برادران اور مسٹر کمار کے چارٹرڈ اکاؤنٹنٹ راجیش اگروال کو پہلے ہی گرفتار کر چکا ہے۔ ان سے حاصل معلومات کی بنیاد پر آج کی چھاپہ مارنے کی کارروائی کی گئی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز