کولکاتہ کے بازاروں میں عید کی خریداری کے لئے اڑیسہ، بہار اور جھارکھنڈ سے آتے ہیں لوگ

Jun 22, 2017 04:12 PM IST | Updated on: Jun 22, 2017 04:12 PM IST

کولکاتہ ۔ رمضان المبارک کا مہینہ جیسے جیسے ختم ہو رہا ہے عید کی تیاریاں زور پکڑ رہی ہیں ۔ کولکاتا کے بازاروں میں عید کی خریداری کے لئے کافی بھیڑ دیکھی جارہی ہے۔ کولکاتا جیسے میٹرو شہرمیں عید کی خریداری کے لئے نہ صرف بنگال بلکہ پڑوسی ریاست اڑیسہ بہار و جھارکھنڈ سے بھی لوگ آتے ہیں ۔ بازاروں میں مہنگائی کے باوجودعید کی خریداری پراثرنہیں دیکھا جا رہا ہے تاہم کارپوریشن کی جانب سے عارضی بازار بھی لگائے گئے ہیں ۔

کولکاتا میں رمضان کی آمد کے ساتھ ہی پورے شہر میں نورانی ماحول دیکھنےکوملتا ہے ۔ مولانا محمّد علی جوہر نے کولکاتا کی رمضان کو ملک بھر میں مثالی بتایا تھا۔ یہاں کے لوگ عبادت میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتے ہیں وہیں رمضان کے ساتھ عید کی تیاریاں بھی خاص ہوتی ہیں ۔

کولکاتہ کے بازاروں میں عید کی خریداری کے لئے اڑیسہ، بہار اور جھارکھنڈ سے آتے ہیں لوگ

اب کیونکہ رمضان کا آخری عشرہ شروع ہوچکا ہے تو  مختلف مساجد میں شب قدر کی راتوں کے اہتمام کے ساتھ اعتکاف میں بیٹھنے والوں کی بڑی تعداد ہے ۔ وہیں خواتین کی بھیڑ بازاروں میں دیکھی جا رہی ہے ۔

shopping1

عید کی تیاریاں خوب سے خوب تر کرنے کے لئے ہر طرح کی چیزوں کی خریداری کے لئے لوگ گھروں سے نکلنے لگے ہیں ۔ بازاروں میں ہر دکان چاہے وہ کپڑے کی ہو یا چوڑیوں و زیورات کی ہر جگھ بھیڑ دیکھی جارہی ہے ۔ کولکاتا میں خریداری کے لئے آنے والوں میں دیگر ریاستوں سمیت بنگلہ دیش کے لوگ بھی ہوتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کے یہاں بھیڑ کافی ہوتی ہے۔ دکاندار بھی عید کے موقع پر خصوصی رعایت کے ساتھ سامان بیچنے کے علاوہ روزداروں کے افطار کے لئے بھی اہتمام کرتے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز