عازمین حج کو پاسپورٹ میں تاخیر ، سبسڈی ختم ہونے اورگلوبل ٹینڈر نہ ہونے جیسے کئی مسائل کا سامنا : محبوب علی قیصر

Nov 26, 2017 02:05 PM IST | Updated on: Nov 26, 2017 02:05 PM IST

پٹنہ : ایک دن میں حاجیوں کے لئے صرف 20 پاس پورٹ بنائے جانے کے معاملہ پر مرکزی حج کمیٹی کے چیئرمین محبوب علی قیصر نے افسوس کا اظہار کیا ہے۔ قیصر نے پٹنہ میں ای ٹی وی سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ سات دسمبرحج فارم بھرنے کی آخری تاریخ ہے۔ ایسے میں پاس پورٹ بنانے کےعمل میں کسی طرح کی کوئ بندش نہیں لگائ جانی چاہئے۔ اس تعلق سے قیصر نے محکمہ خارجہ کے وزیر جنرل وی کے سنگھ سے بھی گفتگو کی اور اس مسئلہ کو حل کرنے کی اپیل کی۔ محبوب علی قیصر کی جانب سے مرکزی وزیر وی کے سنگھ سے گفتگو کے بعد اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی نے محبوب علی قیصر سے فون پر بات چیت کی اور اس مسئلہ کو حل کرلینے کی جانکاری دی۔

حج سبسڈی کے تعلق سے ابھی تک کسی طرح کی کوئی بات واضح نہیں کی گئی ہے۔ مرکزی حج کمیٹی کے چیئرمین محبوب علی قیصر نے کہا کی ایک مرتبہ سبسڈی ختم کرنے سےحاجیوں کومالی دشواریاں ہو سکتی ہے۔ قیصرکے مطابق سپریم کورٹ نے 2022 تک حج سبسڈی کو آہستہ آہستہ ہٹانے کا حکم دیا ہے۔ ایسے میں حکومت کو ایک مرتبہ میں سبسڈی ختم کرنے سے گریز کرنا چاہئے۔ قیصر نے اس تعلق سے مرکزی حکومت سے سنجیدگی سے غور کرنے کی بھی اپیل کی ہے۔

عازمین حج کو پاسپورٹ میں تاخیر ، سبسڈی ختم ہونے اورگلوبل ٹینڈر نہ ہونے جیسے کئی مسائل کا سامنا : محبوب علی قیصر

انہوں نے کہا کہ گلوبل ٹینڈر نہیں ہونے سے حاجیوں کو ہر سال حج کرنے میں زیادہ رقم چکانی پڑتی ہے۔ انہوں نے اس جانب بھی مرکزی حکومت سے پہل کرنے کی اپیل کی ہے۔ محبوب علی نے کہا کہ وہ اس سلسلے میں جلد ہی مختار عباس نقوی سے بھی ملاقات کریں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز