ہندوستانی حکومت آج پہلی مرتبہ سات روہنگیا مسلمانوں کو بھیجے گی میانمار

سات روہنگیا مسلمانوں کوغیر ملکی قانون کی خلاف ورزی کے الزام میں 29 جولائی 2012 کو گرفتار کیا گیا تھا۔

Oct 04, 2018 08:09 AM IST | Updated on: Oct 04, 2018 11:23 AM IST

ہندوستان آسام میں غیر قانونی طریقے سے رہ رہے سات روہنگیا تارکین وطن کو آج یعنی جمعرات کو میانمار واپس بھیجے گا۔  مرکزی حکومت پہلی مرتبہ ایسا قدم اٹھا رہی ہے۔ پولیس کے ذریعے حراست میں لئے جانے کے بعد 2012 سے ہی یہ لوگ آسام کے سلچر ضلع کے کچار جیل میں بند تھے۔

مرکزی وزارت داخلہ کے ایک افسر نے بتایا کہ جمعرات کو منی پور کی مورہ سرحد چوکی پر سات روہنگیا تارکین وطن کو میانمار کے افسران کو سونپا جائے گا۔ افسر نے بتایا کہ میانمار کے سفارت کاروں کو کونسلر پہنچ عطا کی گئی تھی۔ انہوں نے ان تارکین وطن کے پہچان کی تصدیق کی۔

ہندوستانی حکومت آج پہلی مرتبہ سات روہنگیا مسلمانوں کو بھیجے گی میانمار

علامتی تصویر

ایک دیگر افسر نے بتایا کہ پڑوسی ملک کی حکومت کے غیر قانونی تارکین وطن  کے پتے کی رخائن ریاست میں تصدیق کرنے کے بعد ان کے میانمار کی شہریت ہونے کی تصدیق ہوئی ہے۔ یہ پہلی مرتبہ ہے جب روہنگیا تارکین وطن کو ہندوستان سے میانمار بھیجا جائے گا۔

واضح ہو کہ سات روہنگیا مسلمانوں کوغیر ملکی قانون کی خلاف ورزی کے الزام میں 29 جولائی 2012 کو گرفتار کیا گیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز