لالو یادو پھر مشکل میں ، اب گاندھی میدان مہا ریلی کے سلسلے میں انکم ٹیکس محکمہ نے بھیجا نوٹس

Sep 01, 2017 09:23 PM IST | Updated on: Sep 01, 2017 09:23 PM IST

پٹنہ: انکم ٹیکس محکمہ نے راشٹریہ جنتا دل سے 27 اگست کو پٹنہ کے گاندھی میدان میں منعقد بی جے پی بھگاو۔۔ ملک بچاو ریلی میں کئے گئے اخراجات کے سلسلے میں وضاحت طلب کی ہے۔ ریاست کے سابق نائب وزیر اعلی اور آر جے ڈی کے صدر لالو پرساد یادو کے بیٹے تیجسوی یادو نے آج یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ ’ ریلی کے سلسلے میں انکم ٹیکس محکمہ سے ایک نوٹس جاری کیا گیا ہے۔ نوٹس کے ذریعہ محکمہ نے 27اگست کو ریلی میں ہونے والے اخراجات کا ذریعہ بتانے کے لئے کہا ہے ۔ انکم ٹیکس کو نوٹس کا جواب پارٹی کی طرف سے جلد ہی بھیجا جائے گا۔‘

مسٹر یادو نے کہا کہ نریندر مودی حکومت کے اشارے پر مرکزی ایجنسیاں ان کی پارٹی کو پریشان کررہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آر جے ڈی سال یا دو سال میں ایک ریلی کرتا ہے جب کہ بی جے پی پورے ملک میں ان گنت ریلیاں کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ انکم ٹیکس محکمہ کو کبھی بی جے پی سے ریلی میں کئے گئے اخراجات کا حساب مانگنے کی ہمت نہیں ہوئی۔ بی جے پی کی ریلی کافی ہائی ٹیک ہوتی ہے اور اس پر بے حساب خرچ کیا جاتا ہے جب کہ آر جے ڈی کے کارکنان اور حامی اپنے خرچ سے پارٹی کی ریلی میں آتے ہیں۔

لالو یادو پھر مشکل میں ، اب گاندھی میدان مہا ریلی کے سلسلے میں انکم ٹیکس محکمہ نے بھیجا نوٹس

خیال رہے کہ آر جے ڈی کی ریلی میں مسٹر یادو نے مرکز کی نریندر مودی حکومت او ربہار کے وزیر اعلی نتیش کمار پر بری طرح حملہ کیا تھا ۔ ریلی کے انعقاد کے سلسلے میں پارٹی گذشتہ کئی ماہ سے تیاریاں کررہی تھی ۔ ریلی کے دو تین دن قبل سے ہی گاندھی میدان سمیت تقریباَ پورے پٹنہ میں بڑے بڑے پوسٹراور بینرلگائے گئے تھے۔ اس کے علاوہ راجدھانی کے تمام اہم چوراہوں پر بڑے بڑے گیٹ لگائے گئے تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز