ہندوستان بمقابلہ آسٹریلیا : بھونیشور اور کلدیپ کی شاندار گیند بازی ، ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا کو 50 رنوں سے ہرایا

کپتان وراٹ کوہلی (92) اپنی 31 ویں ون ڈے سنچری سے محض آٹھ رن سے چوک گئے اور ہندستان نے آسٹریلیا کے خلاف دوسرے ون ڈے میں جمعرات کو یہاں ایڈن گارڈن میں 50 اوور میں 252 رن کا اسکور بنا یا ہے

Sep 21, 2017 07:04 PM IST | Updated on: Sep 21, 2017 09:40 PM IST

کولکاتہ: کپتان وراٹ کوہلی (92) رن کی شاندار اننگز کے بعد بھونیشور کمار اور کلدیپ کی شاندار گیند بازی کی بدولت ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا کو 50 رنوں سے شکست دیدی ہے ۔  ہندستان نے آسٹریلیا کے خلاف دوسرے ون ڈے میں جمعرات کو یہاں ایڈن گارڈن میں 50 اوور میں 252 رن کا اسکور بنا لیا، جس کے جواب میں آسٹریلیا کی پوری ٹیم 202 رن بناکر ہی آوٹ ہوگئی ۔ کلدیپ یادو نے شاندار ہیٹ لی جبکہ بھونیشور کمار نے 6.1 اوورس میں محض 9 رن دے کر تین وکٹ حاصل کئے ۔ آسٹریلیا کی طر ف سے سب سے زیادہ رن اسٹوئنس نے بنائے ۔ انہوں نے 69 رن کی اننگز کھیلی جب کہ اس کے بعد کپتان اسمتھ نے 59 رن کی اننگز کھیلی ۔ ہیڈ نے 39 اور میکسویل نے 14 رن بنائے ۔ علاوہ ازیں آسٹریلیا کو کوئی بھی کھلاڑی دو عدد تک نہیں پہنچ سکا۔ ٹیم انڈیا کی طرف سے کلدیپ اور بھونیشور نے تین تین وکٹ جبکہ ہاردک پانڈیا اور چہل نے دو دو کھلاڑیوں کو آوٹ کیا۔

مکمل اسکور کارڈ دیکھنے کیلئے یہاں کلک کریں۔

ہندوستان بمقابلہ آسٹریلیا  : بھونیشور اور کلدیپ کی شاندار گیند بازی ، ٹیم انڈیا نے آسٹریلیا کو 50 رنوں سے ہرایا

خیال رے کہ ہندستان کی اننگز کے 47.3 اوور میں بارش آئی، اس وقت آل راؤنڈر ہاردک پانڈیا 19 اور ایک روزہ بالر بھونیشور کمار 18 رنز پر ناٹ آؤٹ تھے ۔کھیل کچھ وقت بعد شروع ہوا اور ہندستان نے آخری گیند پر پہنچتے پہنچتے باقی چار وکٹ گنوادئے اور اس کی اننگز 252 رنز پر سمٹ گئی۔ وراٹ نے اس میچ میں ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کا فیصلہ کیا۔کولکتہ میں گزشتہ تین دنوں کے دورانبارش کی وجہ سے اس میث کے منسوخ ہونے کا خطرہ بڑھ گیا تھا اور 48 ویں اوور میں ہندستانی اننگز میں بارش نے دستک دی ۔ اگرچہ بارش ہلکی تھی اور کھیل جلدی شروع ہوگیا ۔

وراٹ نے ایک شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کیا اور 107 گیندوں میں 92 رنز بنائے۔جس میں انہوں نے آٹھ چوکے لگائے ۔ یہ ان کی سنچری سے آٹھ رنز دور رہ گئی جس میں تیز بولر ناتھن کولٹر نائل نے ان کا وکٹ حاصل کیا ۔ اوپنر روہت شرما (سات) کے 19 رنز کے اسکور پر گرنے کے بعد وراٹ نے دوسری وکٹ کے لئے اوپنر اجنکیا رہانے (55) کے ساتھ 102 رنز کی شراکت کی۔

رہانے نے آؤٹ ہونے سے پہلے 64گیندوں میں سات چوکوں کی مدد سے 55رنز بنائے۔ منیش پانڈے (تین) کوایشٹن ایڈگر نے بولڈکیا ۔پانڈے مسلسل دوسرے میچ میں فلاپ رہے ۔ ان کا وکٹ 131 کے اسکور پر گرا۔وراٹ نے پھر چوتھے وکٹ کے لئے کیدار جادھو (24) کے ساتھ 55 رنز کی شراکت کی۔ ہندستان 36 ویں اوور میں تین وکٹ پر 186 رنز کی مضبوط حالت میں تھا ، لیکن پھر وہ 20 رنز کے دوران کیدار ، وراٹ اور مہندر سنگھ دھونی کے وکٹ گنوادئے ۔ کولٹر نائل نے کیدار اور وراٹ کو جبکہ کین رچرڈسن نے دھونی کو اپنا شکار بنایا ۔ کیدار نے 24 گیندوں کی اننگز میں دو چوکے اور ایک چھکا لگایا ۔پچھلے میچ میں نصف سنچری بنانے والے دھونی اس بار صرف پانچ رنز بنا کر آؤٹ ہوئے ۔ وراٹ کی بدقسمتی رہی کہ وہ اپنی 31 ویں سنچری تک پہنچنے سے محروم رہے۔

بارش کے بعد جب کھیل دوبارہ شروع ہوا تو بھونیشور کمار 20 رنز بناکر آؤٹ ہو گئے ۔ رچرڈسن نے بھونیشور کو آؤٹ کیا ۔ پیٹ کمنز نے کلدیپ یادو (صفر) کی وکٹ حاصل کی۔ ہاردک پانڈیا (20) رچرڈسن کے آخری اوور کی آخری گیند پر شکار ہوگئے ۔ آسٹریلیا کے کولٹر نائل نے 51 رنز کے ساتھ تین وکٹ حاصل کیں اور رچرڈسن نے 55 رنز کے عوض تین وکٹ حاصل کئے ۔کمنز اور ایڈگر کو ایک ایک وکٹ ملا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز