مغربی بنگال : کوچ بہار کے فساد زدہ علاقے میں انڈین یونین مسلم لیگ کے وفد کو داخل نہیں ہونے دیا گیا

مغربی بنگال کے کوچ بہار ضلع کے سیتال گوچی بلاک کے فساد زدہ علاقے جہاں گزشتے ہفتے بڑے پیمانے پر مندر کے قریب مردہ گائے پائے جانے کے بعد فرقہ وارانہ فسادات کے واقعات رونما ہوئے تھے میں انڈین یونین مسلم لیگ کے ایک وفد کوداخل نہیں ہونے دیا گیا ہے۔

Oct 30, 2017 09:49 PM IST | Updated on: Oct 30, 2017 09:49 PM IST

کلکتہ :  مغربی بنگال کے کوچ بہار ضلع کے سیتال گوچی بلاک کے فساد زدہ علاقے جہاں گزشتے ہفتے بڑے پیمانے پر مندر کے قریب مردہ گائے پائے جانے کے بعد فرقہ وارانہ فسادات کے واقعات رونما ہوئے تھے میں انڈین یونین مسلم لیگ کے ایک وفد کوداخل نہیں ہونے دیا گیا ہے۔  تاہم کوچ بہار کے ڈی ایم نے انڈین یونین مسلم لیگ کے وفد کو یقین دلائی ہے کہ ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی اور مسجد و مدرسہ میں توڑ پھوڑ کرنے والوں کو نہیں بخشا جائے گا۔

خیال رہے کہ 16اکتوبر کوسیتال گوچی بلاک میں واقع کالی مندر کے قریب چار مردہ گائے کو پھینک دیا گیا تھا اس کے بعد سے ہی اس واقعہ سے ناراض لوگوں نے جگہ جگہ گھیراؤ کیا اور کئی گاؤں میں مسلمانوں کے گھروں ، مساجداور مدرسوں میں توڑ پھوڑ کیا۔ دو ہفتہ سے زاید وقفہ گزر جانے کے باوجود پورے علاقے میں اب بھی خوف و ہراس کا ماحول ہے۔

مغربی بنگال : کوچ بہار کے فساد زدہ علاقے میں انڈین یونین مسلم لیگ کے وفد کو داخل نہیں ہونے دیا گیا

کھوسر ہاٹ گاؤں کے باشندے محمد فاروق نے یواین آئی کو بتایا کہ مندر کے باہر مردہ گائے کوایک سازش کے تحت رکھا یا تھا ۔ اس کا مقصد مسلمانوں کو ہراساں کرنا تھا۔انہوں نے کہا کہ پولس نے بھی اس بات کو تسلیم کیا ہے کہ اس واقعے کو انجام دینے والے مسلم کمیونیٹی کے نہیں تھے اور یہ گائے بھی مسلمانوں کا نہیں ہے اس کی افواہ پھیلتے ہی مسلمانوں کے گھروں پر حملہ شروع ہوگیا ۔ انڈین یونین مسلم لیگ یوتھ کے صدر محمد صابر غفار جو وفد کے ساتھ اس علاقہ کا دورہ کرنے پہنچے تھے نے بتایا کہ گھوسری ہاٹ جامع مسجد، دابر چھاترا جامع مسجد، شیب پور بازرا وقتیہ مسجد ،داکورہ مسجد ، داکورہ حافظیہ مدرسہ کو شدید نقصان پنچایا گیا ہے ۔انڈین یونین مسلم لیگ نے ڈی ایم کو جو میمورنڈم سپرد کیا ہے اس میں دعویٰ کیا گیا ہے داکرہاٹ مسجد کو مکمل طور پر نقصان پہنچایا گیا ہے ۔

ڈی ایم کو دیے گئے میمورنڈم میں کہا گیا ہے کہ اس پورے علاقے میں مسلمانوں کے دوکانوں و جائداد کو بڑے پیمانے پر نقصان پہنچایا گیا ہے ۔داکر ہاٹ کے عبد القادر نے بتایا کہ 18گھنٹے تک پورے علاقے میں لوٹ مارکا سلسلہ جاری رہا اور پولس ہماری مدد نہیں کی۔انہوں نے کہا کہ پولس کا رویہ جانبدارانہ تھا۔

Loading...

انڈین یونین مسلم لیگ نے اپنے میمورنڈم میں کہا ہے کہ مغربی بنگال سیکولر روایات کی علمبردار سیاسی جماعت ترنمول کانگریس کی حکومت ہے ۔اس کے باوجود کوچ بہار میں اس طرح کا واقعہ پیش آنا افسوس ناک ہے ۔اس لیے ہم ضلع انتظامیہ سے اپیل کرتے ہیں کہ فوری مداخلت کرکے مسلمانوں کے محلہ ، مسجد اور مدرسہ میں توڑ پھوڑ کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے ۔اس کے علاوہ اس واقعے کے پیچھے جن قوتوں کا ہاتھ ہے ان کی نشاندہی کی جائے اس کے علاوہ ہمارا مطالبہ ہے کہ اس واقعہ جن کے جائداد کو نقصان پہنچا ہے ان کو معاوضہ دیا جائے ۔اس میمورنڈم پر انڈین یونین مسلم لیگ مغربی بنگال کے صدر شہنشاہ جہانگیر، انڈین یونین مسلم یوتھ لیگ کے صدر صابر ایس غفاراور دیگر افراد کے دستخط ہیں ۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز