شرد یادو خیمہ کے خلاف کارروائی ، رمئی رام اور ارجن راے سمیت 21 لیڈروں کو جے ڈی یو نے کیا معطل

Aug 14, 2017 04:53 PM IST | Updated on: Aug 14, 2017 04:53 PM IST

پٹنہ: بہار میں حکمراں جنتا دل (یو ) نے آج سابق مرکزی وزیر رمئی رام اور ارجن رائے سمیت اکیس لیڈروں کو پارٹی مخالف سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی وجہ سے پارٹی کی بنیادی رکنیت سے معطل کردیا ہے۔ جنتا دل یو کے ریاستی جنرل سکریٹری انل کمار نے یہاں بتایا کہ پارٹی کے ریاستی صدر وششٹ نارائن سنگھ نے مسٹر رمئی رام اور سیتا مڑھی کے سابق ممبر پارلیمنٹ ارجن رائے سمیت اکیس لیڈروں کو فوری طور پر معطل کردیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مسٹر رام اور مسٹر رائے کے علاوہ سابق ممبراسمبلی راج کشور سنہا، سابق رکن کونسل وجے ورما(مدھے پورا) ، سہرسا کے جنتا دل یو کے ضلع صدر دھنک لال مکھیا کو بھی معطل کیا گیا ہے۔

مسٹر کمار نے بتایا کہ ان لیڈروں کے علاوہ سابق ضلع صدر مدھے پورا(ریاستی قانون ساز کونسل کے رکن) سیا رام یادو، سابق ریاستی صدر جنتا دل یو مزدور سیل وندیشوری سنگھ، ریاستی قانون ساز کونسل مظفر پو اسماعیل منصوری، ضلع صدر تکنیکی سیل میتھلیش کشواہا، ریاستی قانون ساز کونسل کے رکن گائے گھاٹ مسٹر نرنجن رائے، دربھنگہ کے دیوکانت رائے، ٹریڈرس سیل مدھوبنی کے ضلع صدر ٹنکو کیسرا، سونبرسا بلاک صدر جے کمار سنگھ، کہرا بلاک صدر دھریندر یادو، ٹریڈرس سیل ادے چندر ساہا۔، بہاری گنج بلاک کے صدر ویریندر آزاد، ستر کٹیا بلاک صدر سریش یادو ، سور باز ار بلاک صدر وجیندر یادو، کسان سیل مدھے پورا کے رمن سنگھ، مدھے پورا میونسپل کاونسل کے چےئرمین کمل داس اور سیتامڑھی ضلع پریشد کے نائب صدر دیویندر ساہ کو بھی معطل کیا گیا ہے۔

شرد یادو خیمہ کے خلاف کارروائی ، رمئی رام اور ارجن راے سمیت 21 لیڈروں کو جے ڈی یو نے کیا معطل

خیال رہے کہ بہار میں راشٹریہ جنتا دل اور کانگریس سے اتحاد ختم کرکے بی جے پی کے ساتھ حکومت بنانے کے مسٹر نتیش کمار کے فیصلے کے بعد جنتا دل یو کے سینئر لیڈر شرد یادو نے بغاوت کردی ہے ۔ پارٹی نے 11 اگست کو راجیہ سبھا کے رکن علی انور کو پارٹی مخالف سرگرمیویں میں ملوث رہنے کی وجہ سے معطل کردیا تھا۔ اس کے دوسرے دن ہی مسٹر شرد یادو کو راجیہ سبھا میں پارٹی کے لیڈر کے عہدہ سے ہٹا کر ان کی جگہ مسٹر آر سی پی سنگھ کو لیڈر بنادیا تھا۔ مسٹر شرد یادوگذشتہ تین دنوں سے بہار کے مختلف اضلاع کا دورہ کررہے ہیں او رالزام ہے کہ ان کے ساتھ رمئی رام سمیت کئی لیڈر اس میں شامل ہورہے ہیں او رپارٹی کے خلاف کام کررہے ہیں۔

list

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز