اب جیتن رام مانجھی نے بھی پدماوتی کی مخالفت کو بتایا جائز ، سینسر بورڈ سے فلم پر روک لگانے کا مطالبہ

جیتن رام مانجھی نے فلم کی مخالفت کو جائز قراردیتے ہوئے سینسر بورڈ سے پدماوتي پر روک لگانے کامطالبہ کیا ہے

Nov 20, 2017 07:57 PM IST | Updated on: Nov 20, 2017 07:57 PM IST

گیا: فلم پدماوتي کے سلسلے میں ملک بھر میں جاری احتجاج کے دوران بہار کے سابق وزیر اعلی اور ہندوستانی عوام مورچہ (ہم)کے قومی صدر جیتن رام مانجھی نے فلم کی مخالفت کو جائز قراردیتے ہوئے سینسر بورڈ سے پدماوتي پر روک لگانے کامطالبہ کیا ہے۔مسٹر مانجھی نے آج یہاں کہا، "فلم پدماوتي کی مخالفت جائز ہے۔ رانی پدماوتی ملک کی بہادرخاتون تھیں۔ ان کے کردار کو دوسرے طور پر دکھانا کہیں سے بھی درست نہیں ہے۔ انہوں نے سینسر بورڈ سے فلم پر روک لگانے کا مطالبہ کیا۔

قابل ذکر ہے کہ ملک بھر میں جاری احتجاج کے پیش نظر ممتاز فلم ڈائریکٹر سنجے لیلا بھنسالی کی تنازعات میں گھری فلم 'پدماوتي' کی ریلیز ملتوی کر دی گئی ہے۔ فلم کی کہانی راجپوت ملکہ پدماوتي پر مبنی ہے اور اس پر یہ الزام عائد کیا گیا ہے کہ فلم ساز نے اس فلم میں تاریخی حقائق سے چھیڑ چھاڑ کی ہے جس کی وجہ سے یہ فلم تنازعات میں گھر گئی ہے۔

اب جیتن رام مانجھی نے بھی پدماوتی کی مخالفت کو بتایا جائز ، سینسر بورڈ سے فلم پر روک لگانے کا مطالبہ

حالانکہ فلم کے ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی ان تمام باتوں کو متعدد مرتبہ رد کرچکے ہیں اور انہوں نے واضح طور پرکہا ہے کہ جو لوگ فلم کی مخالفت کر رہے ہیں وہ افواہوں پر یقین کر رہے ہیں۔فلم سازوں کوسینٹرل بورڈ آف فلم سرٹیفیکیشن (سی بی ایف) سے ابھی تک اسے ریلیز کرنے کی منظوری نہیں ملی ہے۔سی بی ایف کا کہنا ہے کہ فلم سازوں کی درخواست 'نامکمل تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز