ویڈیو : جب لالو یادو نے فون پر ایس پی سے پوچھا : کون سی دفع لگائے ہو؟

May 14, 2017 01:02 PM IST | Updated on: May 14, 2017 01:37 PM IST

پٹنہ : آر جے ڈی کے سربراہ لالو پرساد اپنے اسٹائل کے لیے جانے جاتے ہیں۔ بات خواہ کسی کی شکایت سننے کی ہو یا پھر اس کا تصفیہ کرنے کی، لالو کا طریقہ ہمیشہ الگ رہتا ہے۔اتوار کو پٹنہ میں لالو اسی انداز میں ایک ایس پی کی کلاس لیتے نظر آئے۔

دراصل لالو پرساد کی رہائش گاہ پر بکسر سے کچھ فریادی آئے تھے، اس دوران لوگوں نے وہاں سے بھی بکسر کے ایس ایچ او کو فون لگایا، لیکن ایس ایچ او نے فون پر شکایت سننے کی بجائے فریادیوں کو جم کر هڑكاديا۔ ایس ایچ او کی باتیں ای ٹی وی / نیوز 18 کے کیمرے میں ریکارڈ ہو گئی۔

یہ بات جیسے ہی رہائش گاہ کے اندر آر جے ڈی کے سربراہ لالو تک پہنچی ، تو انہوں نے تمام فریادیوں کو اپنی رہائش گاہ کے اندر بلایا۔ لالو نے کیمرے کے سامنے ہی پہلے بکسر ضلع کے دھنسوي تھانہ انچارج اور پھر وہاں کے ایس پی کو فون لگایا اور ان پھٹکار لگاتے ہوئے کہا کہ ان کے ایس ایچ او کی کرتوت ریکارڈ ہو گئی ہے اور ایسے میں ایس ایچ او پر کارروائی ضروری ہے۔

لالو نے دھنسوي ایس ایچ او کو فون لگا کر کہا کہ آپ ایک ایس ایچ او ہیں اور سیاست کے بارے میں آپ کو بولنا زیب نہیں دیتا۔ اس کے بعد لالو نے بکسر کے ڈی ایم سے بھی بات کی۔ انہوں نے بکسر کے ایس پی سے اپنے انداز میں متعلقہ معاملہ میں کارروائی کرنے کیلئے کہا اور پوچھا کہ کون سی دفع لگائے ہو۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز