لالو۔ شہاب الدین کے آڈیو کلپ سے بہار کی سیاست گرم، نتیش کمار کے استعفی کا مطالبہ

May 06, 2017 03:57 PM IST | Updated on: May 06, 2017 03:57 PM IST

پٹنہ۔ ایک نجی ٹی وی چینل پر آر جے ڈی سربراہ لالو یادو اور بہار کے دبنگ لیڈر محمد شہاب الدین کی بات چیت کا آڈیو کلپ دکھائے جانے کے بعد بہار میں دوبارہ سیاست تیز ہو گئی ہے۔ چینل پر خبر آتے ہی بی جے پی بہار کے حکمراں مہاگٹھ بندھن پر حملہ آور ہو گئی ہے تو وہیں جے ڈی یو معاملے کو لے کر محتاط بیان دے رہا ہے۔ اپوزیشن کے بڑے لیڈر سشیل مودی نے معاملے کو لے کر وزیر اعلی نتیش کمار سے استعفی کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹیپ نے تصدیق کی ہے کہ یہ کھیل پہلے سے ہو رہا۔ لالو اور شہاب الدین کی ملی بھگت کی بات اس ٹیپ سے ثابت ہوئی ہے۔

مودی نے کہا کہ نتیش کمار میں اگر ہمت ہے تو وہ اتحاد توڑ دیں۔ مودی نے لالو پر فوری طور پر کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔ دوسری طرف آر جے ڈی لیڈر جگدانند سنگھ نے معاملے میں لالو اور اپنی پارٹی کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ شہاب الدین کا لالو سے بات چیت کرنا تو غلط ہے، لیکن شہاب الدین کو ہم پارٹی سے نہیں نکالیں گے۔ وہ ہماری پارٹی کے لیڈر ہیں اور رہیں گے۔

لالو۔ شہاب الدین کے آڈیو کلپ سے بہار کی سیاست گرم، نتیش کمار کے استعفی کا مطالبہ

اپوزیشن کے حملے کے درمیان جے ڈی یو نے محتاط رد عمل ظاہر کرتے ہوئے اس معاملے کی جانچ کی بات کہی ہے۔ بہار کے وزیر جے کمار سنگھ نے نتیش کمار کی شبیہ کو لے کر کوئی بھی سمجھوتہ نہ کرنے کی بات کہی۔ اس واقعہ پر مهاگٹھ بندھن کے رہنما اب خاموش ہیں۔ کانگریس نے اس بارے میں ابھی کچھ بھی کہنے سے انکار کر دیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز