بڑے بھائی نے تین طلاق دینے سے روکا تو اسے چاقو مارکر کیا قتل

May 27, 2017 04:17 PM IST | Updated on: May 27, 2017 04:17 PM IST

کٹیہار۔  تین طلاق کے معاملے کو لیکر جہاں ملک میں ہنگامہ برپا ہے ، وہیں کٹیہار کے ایک گاؤں میں چھوٹے بھائی نے بڑے بھائی کو چاقو سے اس لیے قتل کر دیا  کیوں کہ بڑے بھائی نے چھوٹے بھائی کو طلاق دینے سے روکا تھا ۔ واردات کے بعد ملزم فوراً موقع سے فرار ہو گیا۔ یہ معاملہ کٹیہار کے کوڑھا بلاک کے بسنپور پنچایت کا ہے۔ یہاں چھوٹا بھائی صدام  جو دھلی میں کام کیا کرتا تھا ، کسی کام سے گھر آیا تھا ۔ صدام اور اس کی بیوی کے بیچ کسی بات کو لیکر جھگڑا ہو گیا ۔ جھگڑا اتنا بڑھ گیا کہ  صدام چیخ چیخ کر کہنے لگا کہ وہ ابھی اپنی پہلی بیوی کو تین طلاق دے دیگا ۔ میاں بیوی کے جھگڑے کی آوازیں سن کرساتھ میں رہ رہا صدام کا بڑا  بھائی انارل ان میاں بیوی کے درمیان پہونچا ۔ بڑے بھائی انارل کو جب معلوم ہوا کہ صدام اپنی بیوی کو طلاق دینے پربضد ہے تو اس نے اسے روکا اور سمجھانے کی کوشش کی کہ یہ غلط ہے ۔ دونوں میاں بیوی جو بھی مسئلہ ہے اسے  آپس میں سلجھا لو۔

اس بات پر چھوٹا بھائی صدام  ہوش کھو بیٹھا اور بڑے بھائی پر چاقو سے حملہ کراس کو زخمی کر دیا ۔ جانکاری کے مطابق چھوٹے بھائی صدام نے دو شادی کی تھی اور پہلی بیوی سے اس کا دوسری شادی کے بعد سے اکثر جھگڑا ہوتا رہتا تھا  ۔ زخمی حالت میں انارول کو کٹیہار کے سرکاری ہا سپٹل میں لایا گیا جہاں حالت زیادہ خراب دیکھ  کر اس کو پٹنہ ریفر کیا گیا ۔ پٹنہ جاتے وقت  راستے میں ہی انارول کی موت ہو گئی ۔ وہیں گھر والوں کا رو رو کر برا حال ہے ۔ پولیس نے معاملہ درج کر لیا ہے اور جانچ شروع کر دی ہے ۔                   

بڑے بھائی نے تین طلاق دینے سے روکا تو اسے چاقو مارکر کیا قتل

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز