کانپور ریل حادثہ میں بھی تھا مبینہ دہشت گرد شیوم سونی کا ہاتھ ، پوچھ گچھ میں کئی سنسنی خیز انکشافات

Mar 16, 2017 05:43 PM IST | Updated on: Mar 16, 2017 05:43 PM IST

بیگو سرائے : ہندوستانی ریلوے میں دھماکوں کے ساتھ ہی دہشت گردی کے تار بہار کے بیگو سرائے سے بھی جڑ گئے ہیں۔ منگل کو بہار اے ٹی ایس نے یوپی کے مشتبہ دہشت گرد شیوم سونی کو گرفتار کیا ، تو ایک کے بعد ایک کئی راز کا انکشاف ہوا۔ اب تک پولیس ذرائع سے ملی معلومات کے مطابق کانپور کے پاس پكھراياں میں اندور-پٹنہ ایکسپریس کو ڈی ریل کرنے میں بھی شیوم شامل تھا۔ شیوم نے پولیس افسروں، اے ٹی ایس اور انٹیلی جنس محکمہ کے حکام کے سامنے اعتراف کیا ہے کہ دلسنگھ سرائے کے ساٹھا جگت میں بھی اس نے ٹرین کو ڈی ریل کرنے کی سازش رچی تھی۔

شیوم سے پوچھ گچھ کے لئے بہار اے ٹی ایس، یوپی اے ٹی ایس، اسپیشل برانچ اور انٹیلی جنس محکمہ ریلوے عہدیدار بدھ کی دیر شام ہی بیگوسرائے پہنچے تھے۔ ایس پی رنجیت کمار مشرا نے بتایا کہ این آئی اے کی ٹیم کو بھی شیوم سے پوچھ گچھ کرنے کے لئے بلایا گیا ہے۔ شیوم کی اصلیت کی جانچ کرنے میں مصروف افسران جب شیوم کے سسرال پہنچے ، تو مشتبہ موبائل میں وہاٹس ایپ کے زیادہ تر میسج اردو میں تھے۔

کانپور ریل حادثہ میں بھی تھا مبینہ دہشت گرد شیوم سونی کا ہاتھ ، پوچھ گچھ میں کئی سنسنی خیز انکشافات

اطلاعات کے مطابق شیوم گزشتہ آٹھ ماہ سے سسرال چیريا برياپور کے کروڑ گاؤں میں رہ رہا تھا۔ بیگو سرائے کے ایس پی رنجیت کمار مشرا نے بتایا کہ شیوم نے ریلوے ڈی ایس پی کی پوچھ گچھ میں کئی اہم انکشافات کیے ہیں۔ اس کے دلسنگھ سرائے -ساٹھا جگت کے درمیان ٹریک پر کنکریٹ سلیپر رکھے جانے کے معاملہ میں بھی ملوث ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز