جب بہار اور گجرات میں مکمل طور پر شراب بندی نافذ ہوسکتی ہے تو ملک بھر میں کیوں نہیں : نتیش کمار

Dec 10, 2017 09:08 PM IST | Updated on: Dec 10, 2017 09:08 PM IST

نئی دہلی : بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے آج یہ کہتے ہوئے پورے ملک میں شراب بندی کی وکالت کی کہ یہ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی سب سے بڑی نشانی ہوگی۔ نتیش کمار نے آج یہاں پارٹی کے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بہار میں شراب بندی کے بعد کڈنی، امرا ض قلب اور اعصابی کمزوری سے متعلق بیماریوں سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں کمی آئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بہار میں شراب بندی کے ایک سال کے اندر کڈنی کے مریضوں کی تعداد میں 39 فیصد اور اعصابی کمزوری کے مریضوں کی تعداد میں 44 فیصد کمی آئي ہے۔ مسٹر نتیش کمار نے کانگریس اور بایاں محاذ کی پارٹیوں کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ وہ شراب بندی اور شراب نوشی کے بارے میں کچھ کیوں نہیں بولتے؟ ان کا کہنا تھا جب بہار اور گجرات میں شراب بندی مکمل طورپر نافذ ہوسکتی ہے، تو پورے میں اس کا اطلاق کیوں نہیں کیا جاسکتا ہے؟

جب بہار اور گجرات میں مکمل طور پر شراب بندی نافذ ہوسکتی ہے تو ملک بھر میں کیوں نہیں : نتیش کمار

انہوں نے کہا کہ ہندوازم، اسلام اور سکھ مت سبھی مذاب شراب نوشی کے خلاف ہيں اور پورے ملک میں شراب بندی کا اطلاق تمام مذاہب کے یکساں احترام کے ساتھ ہی فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی سب سے بڑی مثال ہوگی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز