لالو۔ رابڑی کو ایک اور جھٹکا: پٹنہ ایئرپورٹ پر اب خاص مراعات نہیں

Jul 22, 2017 07:25 PM IST | Updated on: Jul 22, 2017 07:25 PM IST

نئی دہلی۔ راشٹریہ جنتا دل کے صدر اور سابق مرکزی وزیر لالو پرساد یادو اور ان کی بیوی بہار کی سابق وزیر اعلی رابڑی دیوی سے پٹنہ ایئرپورٹ پر ہوائی جہاز تک اپنی گاڑی لے جانے کی اجازت واپس لے لی گئی ہے۔ سول ایوی ایشن کی وزارت نے سول ایوی ایشن سیکورٹی بیورو (بی سی اے ایس )کو لکھے گئے ایک خط میں یہ سہولت واپس لینے کی ہدایت دی ہے۔ مسٹر یادو ریلوے کے وزیر کے علاوہ بہار کے وزیر اعلی بھی رہے ہیں۔ انہیں اور محترمہ رابڑی دیوی کو یکم اگست 2009 کو جاری ہوا بازی سیکورٹی سرکلر کے ذریعے بہار کے دارالحکومت پٹنہ میں ان کی گاڑی میں بورڈنگ کے لئے ہوائی جہاز تک جانے اور لینڈنگ پر واپسی کے لئے ان کی گاڑی ہوائی جہاز تک لے جانے کی اجازت دی گئی تھی۔

وزارت کے خط میں کہا گیا ہے "اب یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ مسٹر لالو پرساد یادو اورمحترمہ رابڑی دیوی کو دی گئی اجازت واپس لے لی جائے۔ اس کے مطابق،بی سی اے ایس سے درخواست ہے کہ وہ اس سلسلے میں تمام متعلقہ ایجنسیوں کو ہدایات جاری کرے۔ " مسٹر یادو اور ان کے خاندان پربے نامی پراپرٹی رکھنے اور کالا دھن کو سفید کرنے کا الزام ہے۔ اس سلسلے میں گزشتہ دنوں ای ڈی اور مرکزی تفتیشی بیورو نے پٹنہ، دہلی اور گروگرام سمیت مختلف مقامات پر ان کے ٹھکانوں پر چھاپے ماری بھی کی تھی۔

لالو۔ رابڑی کو ایک اور جھٹکا: پٹنہ ایئرپورٹ پر اب خاص مراعات نہیں

راشٹریہ جنتا دل کے صدر اور سابق مرکزی وزیر لالو پرساد یادو اور ان کی بیوی بہار کی سابق وزیر اعلی رابڑی دیوی : فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز