بایاں محاذ کی ریلی پر پولیس کا لاٹھی چارج ، سینکڑوں افراد زخمی: بمان بوس

May 22, 2017 08:54 PM IST | Updated on: May 22, 2017 08:54 PM IST

کلکتہ۔ بایاں محاذ کے چیرمین بمان بوس نے آج پولس پر الزام عائد کیا ہے کہ کلکتہ اور ہوڑہ شہر میں بایاں محاذ کے پر امن ریاستی سیکریٹریٹ مارچ نو بانو مارچ کے دوران مختلف مقامات پر لاٹھی چارج کیا گیا جس میں سیکڑوں پارٹی کارکنا ن اور خواتین شامل تھیں، زخمی ہوگئے ہیں ۔ بایاں محاذ کی ایک درجن سے زائد تنظیموں نے ریاست میں بے روزگاری میں اضافہ، جمہوریت پرحملہ، فرقہ وارانہ تشدد کے واقعات میں اضافہ اور فوڈ سیکورٹی کے مطالبہ پر آج ریاستی سیکریٹریٹ مارچ نبنو مارچ کا اہتمام کیا گیا تھا۔ مسٹربوس نے کہا کہ پولیس نے آج شہر کے متعدد مقامات پر بریگیڈ کھڑا کررکھا تھا۔بایاں محاذ کا جلوس جیسے ہی بریگیڈ کے قریب پہنچا پولیس نے ریلی کے شرکاء پر لاٹھی چارج شروع کردی ۔آنسو گیس کا استعمال کیا گیا جس کی وجہ سے درجنوں کارکنان زخمی ہوگئے۔

بوس نے کہا کہ پولیس نے بے رحمی سے مظاہرین پر لاٹھی چارج کیا جس کی وجہ سے ان کے چہرے، بدن اور مختلف حصوں سے خون بہہ رہے تھے۔اس کے ساتھ ہی پولس نے خواتین کے ساتھ بھی بے رحمی کا مظاہرہ کیا ۔بوس نے کہا کہ کل ریاست بھر میں مذمتی دن منایا جائے گا۔ چکرورتی نے یو این آئی سے کہا کہ ہمارے 20ممبران ریاستی سیکریٹریٹ کے دروازے تک پہنچ گئے تھے ۔تاکہ ریاست میں بے روزگاری ، کسانوں کے مظالم اور دیگر موضوعات کو اٹھا یا جاسکے۔مگر پولس نے ہمیں احتجاج کرنے نہیں دیا ۔ہمیں زبردستی پولس گاڑی میں بیٹھا کر یہاں تھانہ میں لا یا گیا ہے ۔مگر اب تک یہ نہیں بتایا گیا ہے کہ ہمیں گرفتار کیا جارہا ہے یا نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی کلکتہ شہر سے چلی گئی ہیں کیوں کہ ان کے پاس کسانوں کے مسائل پر بات چیت کرنے کا وقت نہیں ہے ۔انہوں نے ریاست کو قید خانہ میں تبدیل کردیا ہے ۔

بایاں محاذ کی ریلی پر پولیس کا لاٹھی چارج ، سینکڑوں افراد زخمی: بمان بوس

خیا ل رہے کہ بایاں محاذ کی 11جماعتوں نے آج شہر کے مختلف پانچ مقامات پر ریاستی سیکریٹریٹ نوبنو مارچ کا اہتمام کیا تھا۔بایاں محاذ کے چیرمین بمان بوس نے کہا کہ ہمارے ممبران اسمبلی کو فوری بلا شرط رہا کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے ممبران اسمبلی کو گرفتار کرکے علی پور کوٹ لے جایا گیا ہے ۔ہم اس کی شدید مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں کہ انہیں رہا کیا جائے۔ تاہم پولیس نے کسی بھی گرفتاری کی تصدیق نہیں کی ہے ۔بایاں محاذ کے نوبنو مارچ کے پیش نظر ریاستی سیکریٹریٹ کے چہارجانب سخت سیکورٹی کے انتظامات کیے گئے تھے۔ وزیرا علیٰ ممتا بنرجی ریاستی سیکریٹریٹ میں موجود نہیں تھیں۔ وہ بیر بھوم میں انتظامی میٹنگ میں شرکت گئی ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز